The news is by your side.

Advertisement

رواں سیزن کپاس کی پیداوار میں شدید کمی

ملتان: رواں سیزن کپاس کی پیداوار میں شدید کمی50لاکھ گانٹھ سے بھی کم روئی پیدا ہونے کا خدشہ پیدا ہوگیا ہے ،جس سے ملکی معیشت کو شدید دھچکا لگنے کا اندیشہ ہے۔

پنجاب حکومت کی جانب سے پچھلے سال کی نسبت 35 فیصد کم کرکے 95لاکھ گانٹھون کا ٹارگٹ مقرر کیا گیا جو پورا نہیں بلکہ پچاس لاکھ سے بھی کم ہونے کا خدشہ ہے، جس سے ملکی معیشت کو شدید نقصان پہنچنے کا اندیشہ ہے۔

cotton

کپاس کی فصل کو سفید مکھی کے حملہ نے شدید متاثر کیا ہے، جس کو کنٹرول کرنے میں محکمہ زراعت مکمل طور پر ناکام رہا، غلط اعداد وشمار دے کر کسانوں کا مزید استحصال کیا جارہا ہے۔


مزید پڑھیں : بارشوں کے باعث روئی کی قیمت میں اضافہ


ایک اندازہ کے مطابق پاکستان کی ضرورت کا نصف حصہ باہر سے منگوایا جائے گا، جس پر کثیر زرمبادلہ خرچ ہوگا، صوبائی وزیر زراعت اور سیکرٹری زراعت پنجاب کے شدید اختلاف کی وجہ سے بھی کپاس پر توجہ مرکوز نہیں کی گئی، جس کا نقصان کسانوں اور ملکی معیشت کو پہنچ رہا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں