سرگودھا، کمسن بچی کا قتل، قاتل باپ نے جنات کو قصوروار ٹھہرادیا sargodha
The news is by your side.

Advertisement

سرگودھا، کمسن بچی کا قتل، قاتل باپ نے جنات کو قصوروار ٹھہرادیا

سرگودھا: صوبہ پنجاب کے شہر سرگودھا میں باپ نے جعلی عامل کے حکم پر عمل کرتے ہوئے ڈیڑھ سالہ بیٹی مبینہ طور پر قتل کردی، پولیس نے ملزمان کو گرفتار کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق سرگودھا میں باپ مالی حالت بدلنے کے لیے جعلی عامل کے پاس گیا جس نے بیٹی کو قتل کرنے کا حکم دیا جس پر ظالم باپ نے اپنی لخت جگر سویرا کی زندگی میں اندھیرا کردیا، بھائیوں اور دیگر رشتہ داروں سمیت چھ افراد کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا۔

پولیس کے مطابق ملزم باپ قتل تسلیم کرنے سے انکاری ہے اور کہہ رہا ہے کہ جنات نے بیٹی کو قتل کیا، پولیس ذرائع کے مطابق سیدھا سیدھا قتل کا کیس ہے کسی توہم پرستی کو نہیں مان سکتے۔

رپورٹ کے مطابق ملزمان بچی کو قتل کرنے کے بعد ڈسٹرکٹ ٹیچنگ اسپتال سرگودھا لے کر پہنچے جہاں ڈاکٹروں نے ان کے مشکوک رویے پر پولیس کو اطلاع دی۔

ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ معصوم بچی کے جسم پر چھری کے وار کے نشانات واضح تھے۔

پولیس کے مطابق ملزم مطاہر رسول نے اپنی بیوی سندس کو چھ ماہ قبل طلاق دی تھی او روہ اس سے علیحدگی اختیار کرچکی تھی جبکہ بچی کو اس نے زبردستی اپنے اور اپنے اہل خانہ کے ساتھ رکھا ہوا تھا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ بچی کی ماں سندس کی مدعیت میں مقدمہ درج کرلیا گیا ہے، گرفتاریاں عمل میں لائی جاچکی ہیں اور بہت جلد حقائق منظر عام پر لائیں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں