The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب: پارسل تاخیر سے پہنچانے پر کوریئر کمپنی معطل

ریاض: سعودی عرب میں سروسز میں تاخیر پر ایک کوریئر کمپنی کو معطل کردیا گیا، کمپنی نے پارسل تاخیر سے پہنچایا تھا۔ اس سے پہلے بھی ایک کوریئر کمپنی پر ایک لاکھ ریال جرمانہ عائد کیا جا چکا ہے۔

سعودی ویب سائٹ کے مطابق سعودی کمیونیکیشن اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی کمیشن نے کوریئر کمپنی سمسا ایکسپریس کو پارسل کی ترسیل میں تاخیر پر معطل کردیا۔

کمیشن نے کہا ہے کہ جو پوسٹل سروس پارسل کی ترسیل میں گڑبڑ کرے گی، مقررہ وقت پر پہنچانے میں ٹال مٹول سے کام لے گی اور صارفین کو غلط اطلاع دے کر گمراہ کرنے کی کوشش کرے گی اسے معطل کردیا جائے گا۔

کمیونیکیشن اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی کمیشن نے مزید کہا کہ کمپنی پر پوسٹل سروس کے لیے پابندی لگا دی گئی ہے، کمپنی صارفین سے تا اطلاع ثانی سروسز کے حوالے سے کوئی معاہدہ نہ کرے اور نہ ہی تجارتی اداروں سے ترسیل کے معاہدے کیے جائیں۔

کمیشن نے کمپنی کو حکم دیا ہے کہ وہ پہلی فرصت میں اپنا بنیادی ڈھانچہ ٹھیک کرے اور صارفین کی شکایات دور کرے۔

کمیشن نے اس حوالے سے کمپنی کو مہلت دی اور وارننگ دی ہے کہ اگر اس نے مہلت کے دوران صارفین کی شکایات دور نہ کیں اور اپنا بنیادی ڈھانچہ درست نہ کیا تو اس کا لائسنس ضبط کرلیا جائے گا اور تمام اداروں کے سامنے نتائج کی ذمہ دار بھی وہ خود ہوگی۔

خیال رہے کہ اس سے قبل کمیشن نے صارفین کے حقوق کی خلاف ورزی پر ایک کوریئر کمپنی پر 1 لاکھ ریال کا جرمانہ بھی عائد کیا تھا۔

کمیونیکیشن کمیشن نے صارفین کے حقوق کی خلاف ورزی کی نشاندہی کرتے ہوئے کہا کہ کوریئر کمپنی نے پارسل دیے گئے پتے پر نہیں پہنچایا، دوسری خلاف ورزی یہ کی کہ پارسل پہنچانے میں تاخیر کی گئی۔ کمپنی کی یہ کوتاہیاں تحفظ صارفین منشور کی دفعہ 5 کے زمرے میں آتی ہیں۔

کمیونیکیشن کمیشن کے مطابق مبینہ خلاف ورزیوں پر کوریئر کمپنی پر 1 لاکھ ریال تک کا جرمانہ کیا گیا جبکہ اسے تاکید کی گئی کہ ایک ہفتے کے اندر اپنی غلطیوں کی اصلاح کرے اور آئندہ اس قسم کی کوتاہی سے باز رہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں