The news is by your side.

Advertisement

ڈاکٹر ماہا شاہ کی قبر کشائی اور پوسٹ مارٹم سے متعلق درخواست منظور

کراچی : جوڈیشل مجسٹریٹ جنوبی نے ڈاکٹر ماہا شاہ کی قبر کشائی اور پوسٹ مارٹم سے متعلق درخواست منظور کرلی اور کہا قبر کشائی،پوسٹ مارٹم قانون کے مطابق کی جائے۔

تفصیلات کے مطابق جوڈیشل مجسٹریٹ جنوبی نے ڈاکٹر ماہا شاہ مبینہ خود کشی کیس میں قبرکشائی،پوسٹ مار ٹم کی درخواست پرتحریری فیصلہ جاری کردیا۔

فیصلے میں ڈاکٹرماہاشاہ کی قبر کشائی،پوسٹ مارٹم سے متعلق درخواست منظور کرتے ہوئے کہا عدالت کو قبر کشائی پر کوئی اعتراض نہیں ہے ، استغاثہ کارروائی کرے عدالت تفتیش میں مداخلت نہیں کرسکتی۔

تحریری حکم میں کہا گیا کہ ڈاکٹرماہاکی قبر کشائی،پوسٹ مارٹم قانون کے مطابق کی جائے۔

تفتیشی افسر نے درخواست میں کہا گیا تھا کہ رپورٹ کے مطابق گولی بائیں جانب لگی ،دائیں جانب سے خارج ہوئی، مدعی کی درخواست ہے ڈاکٹر نے رپورٹ غلط دی۔

مقدمہ ڈاکٹر ماہا شاہ کے والد آصف علی شاہ کی مدعیت میں درج ہے اور مقدمے میں ملزم جنید ،وقاص، عرفان قریشی و دیگر نامزد ہیں۔

یاد رہے ایس پی انویسٹی گیشن ساؤتھ نے ڈاکٹر ماہا علی کی قبر کشائی کے لیے سیشن جج میر پور خاص کو خط لکھا تھا ، جس میں کہا گیا تھا کہ کیس میں تحقیقات کے لیے قبر کشائی ضروری ہے۔

خط کے متن میں کہا گیا تھا کہ 18 اگست کو ڈاکٹر ماہا سر میں گولی لگنے سے زخمی ہوئیں،اسپتال منتقلی کے بعد ڈاکٹر ماہا انتقال کر گئیں، جناح اسپتال میں میڈیکل رپورٹ ڈاکٹر عرفان نے غلط بنائی،ڈاکٹر عرفان،جنید اور وقاص کو شامل تفتیش کیا گیا ہے۔

خط میں کہا گیا تھا کہ رپورٹ کے مطابق گولی بائیں جانب سے لگی اور دائیں طرف سے نکلی، ڈاکٹر ماہا کی موت سے متعلق اس کے والد نے سوال اٹھائے ہیں۔

خیال رہے کہ  کراچی کے علاقے ڈیفنس کی رہائشی ڈاکٹر ماہا نے مبینہ طور پر خود کشی کر لی تھی، پولیس نے شک کی بنیاد پر 2 افراد کو گرفتار کیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں