The news is by your side.

Advertisement

منشیات برآمدگی کیس: رانا ثنا اللہ کی درخواست ضمانت مسترد

لاہور: عدالت نے منشیات برآمدگی کیس میں گرفتار مسلم لیگ ن کے رہنما رانا ثنااللہ کی درخواست ضمانت مسترد کردی۔

تفصیلات کے مطابق لاہور کی انسداد منشیات کی خصوصی عداتل کے جج نے منشیات برآمدگی کیس میں رانا ثنا اللہ سمیت پانچ شریک ملزمان کی درخواست ضمانت پر سماعت کی۔

عدالت میں سماعت کے دوران رانا ثنا اللہ کے وکیل نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ ان کے موکل اپنے اسٹاف کے ہمراہ لاہور کا سفر کررہے تھے، ایک گاڑی پروٹوکول کی تھی اور ایک رانا ثنا اللہ کی گاڑی تھی۔

وکیل صفائی نے کہا کہ ان کے موکل نے پہلے ہی بتا دیا تھا کہ انہیں گرفتار کیا جائے گا، رانا ثنا اللہ کو سیاسی بنیادوں پر اے این ایف نے گرفتار کیا۔

اے این ایف کے وکیل نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ رانا ثنا اللہ کے دلائل میں وکلا نے ساری سیاسی باتیں کی ہیں، لگ رہا تھا عدالتی کارروائی نہیں کوئی جلسہ ہے، اس کیس کے 14 میموز ہیں جنہیں لکھنے میں ایک گھنٹے سے زائد کا وقت لگتا ہے، مقدمے کے اندراج میں تاخیر والی بات درست نہیں ہے۔

اے این ایف کے وکیل نے کہا کہ ایک ایک سیکنڈ کا حساب دے سکتے ہیں، ملزموں کے خلاف ٹھوس شواہد موجود ہیں لہذا عدالت ضمانت خارج کرے۔

عدالت نے دلائل مکمل ہونے پر رانا ثنااللہ کی ضمانت خارج جبکہ پانچ شریک ملزمان کو ضمانت پر رہا کرنے کا حکم دے دیا۔

واضح رہے انسداد منشیات فورس نے رانا ثنا اللہ کو اسلام آباد سےلاہورجاتے ہوئےموٹر وے سے حراست میں لیا تھا ، راناثنااللہ کی گاڑی سے بھاری مقدار میں ہیروئن برآمد ہوئی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں