The news is by your side.

Advertisement

ایران کی انجلینا جولی کوعدالت نے بڑی سزا سنادی

تہران : ایرنی عدالت نے پلاسٹک سرجری سے اپنے چہرے کو انجلینا جولی جیسا بنانے کی کوشش کرنے والی ایک لڑکی کو دس سال قید کی سزا سنا دی، مقدمہ ایک سال سے زیر سماعت تھا۔

ایران کی انقلاب عدالت کی جانب سے سزا یافتہ لڑکی فاطمہ خویشوند کو اس فیصلے کیخلاف اپیل کرنے کا حق حاصل ہے، انسٹا گرام اسٹار کو پولیس نے اکتوبر2019 کو گرفتار کیا تھا۔

ایرانی میڈیارپورٹس کے مطابق دی فاطمہ خویشوند جسے سحر تبر کے نام سے بھی جانا جاتا ہے کو اکتوبر 2019 کو 22 سال کی عمر میں گرفتار کیا گیا تھا۔

ایک سال سے زائد عرصے تک مقدمے کی سماعت کے بعد اسے 10 سال قید کی سزا سنائی گئی ہے۔ اس حوالے سے خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ سحر تبر سزا ختم کرنے کے لیے عدالت سے معافی کی درخواست دے سکتی ہیں۔

ایران کی نام نہاد انجیلینا جولی نے کہا کہ مجھ پر چار الزامات عائد کیے گئے تھے، ان میں سے دو الزامات میں میں بری ہو چکی ہوں، باقی دو الزامات میں مجھے عدالت سے معافی کی امید ہے فاطمہ کا کہنا تھا کہ دس سال قید کی سزا کے خلاف وہ اپیل دائر کریں گی۔

خیال رہے کہ سحر تبر سنہ 2017 میں اس وقت سامنے آئیں جب انہوں نے امریکی اداکارہ انجیلینا جولی کی ہم شکل بننے کی کوشش کرتے ہوئے اپنی پلاسٹک سرجری کرائی جس کے نتیجے میں اس کی شکل مزید بگڑ گئی تھی۔

بعد ازاں اس نے اعتراف کیا کہ وہ واقعی جولی کی طرح نہیں وہ فوٹو شاپ کے ذریعے اپنے تصاویر سے لوگوں کو دھوکہ دیتی رہی ہے، حقیقت میں اس نے کوئی پلاسٹک سرجری بھی نہیں کرائی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں