The news is by your side.

Advertisement

کرونا وبا میں لوگوں کی آمدنی کتنی کم ہوئی؟ اہم رپورٹ جاری

واشنگٹن: امريکی کمپنی ’گيلپ‘ کے ايک تازہ سروے میں انکشاف کیا گیا ہے کہ کرونا وبا کے دوران دنيا کے ہر دوسرے شخص کی آمدنی ميں کمی واقع ہوئی۔

تفصیلات کے مطابق گيلپ کے ايک تازہ سروے میں کہا گیا ہے کہ کرونا وبا کے دوران آمدنی ميں سب سے زيادہ کمی تھائی لينڈ ميں ہوئی ہے، جب کہ مہلک ترین عالمی وبا کے دوران دنيا کے ہر دوسرے شخص کی آمدنی ميں کمی واقع ہوئی۔

گيلپ کے سروے کے مطابق آمدنی ميں سب سے زيادہ کمی تھائی لينڈ ميں ديکھی گئی، جہاں لوگوں کی ماہانہ تنخواہ ميں 76 في صد تک کمی آئی، جب کہ سب سے کم کمی سوئٹزرلينڈ ميں ديکھی گئی، جہاں يہ تناسب 10 في صد رہا۔

گيلپ کا کہنا ہے کہ آمدنی ميں کمی سے دنیا بھر میں متاثر ہونے والوں کی تعداد 1.6 بلين بنتی ہے، غريب ممالک کرونا وبا سے زیادہ متاثر ہوئے، جب کہ عورتيں مردوں کے مقابلے ميں زيادہ متاثر ہوئيں۔

وہ ملک جس کا کرونا بھی کچھ نہ بگاڑ سکا

واضح رہے کہ گيلپ نے اس سروے کے لیے 117 ممالک ميں 3 لاکھ افراد سے ان کی رائے لی تھی۔

کرونا وبا سے دنیا بھر میں 220 ممالک اور علاقوں میں اب تک 32 لاکھ، 27 ہزار 200 افراد ہلاک ہو چکے ہیں، جب وائرس مجموعی طور پر 15 کروڑ 41 لاکھ 97 ہزار افراد کو متاثر کر چکا ہے، جن میں 13 کروڑ 16 لاکھ اور 17 ہزار مریض صحت یاب ہو چکے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں