اسپاٹ فکسنگ: شاہ زیب حسن کی سزا ایک سے بڑھا کر چار سال کردی گئی Shahzaib Hasan
The news is by your side.

Advertisement

اسپاٹ فکسنگ: شاہ زیب حسن کی سزا ایک سے بڑھا کر چار سال کردی گئی

لاہور: پی سی بی ایپلیٹ ٹریبونل نے ٹیسٹ کرکٹر شاہ زیب حسن کی سزا ایک سال سے بڑھا کر چار سال کردی۔ دس لاکھ روپے جرمانہ بھی برقرار رہے گا۔

تفصیلات کے مطابق ٹیسٹ کرکٹر شاہ زیب حسن پر پی ایس ایل سیزن ٹو میں کھلاڑیوں کو اسپاٹ فکسنگ کے لیے اکسانے، عدم تعاون، معاونت نہ کرنے کے الزامات ثابت ہونے پر پی سی ایپلٹ ٹریبونل نے سزا ایک سے بڑھا کر چار سال کردی ہے جبکہ دس لاکھ جرمانہ بھی برقرار رکھا گیا ہے۔

شاہ زیب ایک سال کی سزا کاٹ چکے ہیں اب وہ مزید تین سال کرکٹ سے دور رہیں گے، شاہ زیب کے وکیل نے سزا کے خلاف اپیل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

واضح رہے کہ پی سی بی انٹیگریٹی کمیٹی نے جرم ثابت ہونے پر شاہ زیب کو ایک سال کے لیے معطل اور دس لاکھ روپے جرمانہ کی سزا سنائی تھی۔

مزید پڑھیں: اسپاٹ فکسنگ کیس، شاہ زیب کی درخواست پر فیصلہ محفوظ، 10 اگست کو سنایا جائے گا

خیال رہے کہ اسپاٹ فکسنگ اسکینڈل میں شرجیل خان پر ڈھائی سال معطل سمیت پانچ سال پابندی جبکہ خالد لطیف کو پانچ سال پابندی کی سزا سنائی جاچکی ہے، دونوں کرکٹرز کی اپیلیں بھی ٹریبونل میں مسترد ہوچکی ہیں۔

اسی کیس میں ملزم ناصر جمشید کو تحقیقات میں عدم تعاون پر ایک سال کے لیے معطل کیا گیا تھا جبکہ فکسنگ الزامات میں ان کے کیس کی ٹریبونل میں سماعت مکمل اور فیصلہ محفوظ کیا جاچکا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں