سندھ میں داعش کے نیٹ ورک میں 53 دہشت گرد شامل ہیں ،سی ٹی ڈی -
The news is by your side.

Advertisement

سندھ میں داعش کے نیٹ ورک میں 53 دہشت گرد شامل ہیں ،سی ٹی ڈی

کراچی : کاؤنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ (سی ٹی ڈی) نے سانحہ صفورہ کے بعد کراچی سمیت سندھ بھر میں داعش کے نیٹ ورک کے حوالے سے رپورٹ تیار کی ہے ، جس میں 53 افراد پر مشتمل نیٹ ورک کی نشاندہی کی گئی ہے ۔

سی ٹی ڈی رپورٹ کے مطابق کراچی سمیت سندھ بھر میں داعش کے نیٹ ورک میں 53 دہشت گرد شامل ہیں، رپورٹ کے مطابق عبداللہ یوسف عرف عبدالعزیز عرف ثاقت داعش کا امیر ہے ۔

عبداللہ منصوری اور اور مسری پٹھان ڈیرہ اسماعیل خان سے تعلق رکھتے ہیں، طیب اور علی رحمن انجنیئر اور کراچی کے رہائشی ہیں۔ محمد عدنان اور محمد اصغر حیدرآباداور کوٹری کے رہائشی ہیں شاہد کھوکھر حیدرآباد اور پٹھان ون نامی دہشت گرد بلوچستان کا رہنے والا ہے۔

رپورٹ کے مطابق داعش کے دہشت گرد عمر عرف جلال کوو القاعدہ عرب کے دہشت گرد فنڈنگ کرتے تھے ، جبکہ عمر عرف جلال کو سعودی عرب ، کویت اور بحرین سے فنڈنگ ہوتی تھی ۔

عمر عرف جلال پاکستانی رقم ”یورو“ کی شکل میں افغانستان بھیجتا تھا۔ سانحہ صفورہ کے بعد باقاعدہ طو ر پر داعش نیٹ ورک کا انکشاف ہوا اور پھر سی ٹی ڈی کے انچارج راجہ عمر خطاب نے جب ملزمان کو گرفتار کیا تو انہوں نے داعش کے اس نیٹ ورک کی نشاندہی کی اب داعش کے اس نیٹ ورک کی تلاش جاری ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں