The news is by your side.

Advertisement

مودی سرکارکشمیریوں سے خوفزدہ ، 72 ویں روزبھی کرفیو برقرار

سرینگر: بھارتی ظلم وبربریت تھم نہ سکی، 72 روز گزر جانے کے باوجود مقبوضہ کشمیر میں کرفیو برقرار ہے۔

تفصیلات کے مطابق مقبوضہ وادی میں بھارتی جارحیت میں آئے روز اضافہ ہورہا ہے، مواصلاتی نظام تاحال معطل ہے، جبکہ بھارتی مظالم پر عالمی برادری کی مجرمانہ خاموشی بھی برقرار ہے۔

وادی کے ہر شاہراہ اور چوراہے پر قابض بھارتی فورسز تعینات ہیں، بھارتی حکام نے دعویٰ کیا ہے کہ وادی میں پوسٹ پیڈ موبائل فون جزوی طور پر بحال کر دی گئی ہے۔

کرفیو کے باعث مریضوں کو اسپتال پہنچنے میں سخت مشکلات کا سامنا ہے جبکہ کئی مریض بروقت اسپتال نہ پہنچنے کے باعث راستے میں ہی جاں بحق ہوگئے۔

مقبوضہ وادی میں اسکول، کالج، تجارتی مراکز بند، ٹرانسپورٹ سروس معطل ہے، نظام زندگی مفلوج ہوکر رہ گئی ہے، لاکھوں کشمیری گھروں میں محصور ہیں۔

غدا کی قلت، بھوک سے بلکتے بچوں اور مریضوں کی اکھڑتی سانسوں سے مجبور کشمیری باہر نکلیں تو ان پر پیلٹ گنز کا استعمال کیا جاتا ہے جس سے کشمیری نوجوان بینائی سے محروم ہو رہے ہیں۔

حیران ہوں عالمی میڈیا ہانگ کانگ احتجاج کی کوریج کر رہا ہے کشمیرکی نہیں، عمران خان

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق کشمیری رہنماؤں، نوجوانوں سمیت بچے بھی جیلوں میں قید ہیں، 2 ماہ سے کشمیریوں کو نمازجمعہ مساجد میں ادا کرنے نہیں دی جا رہی۔

سخت کرفیو کے باوجود بھارت کشمیریوں کے دلوں سے آزادی کا جذبہ نہیں نکال سکا، آج بھی گلی کوچوں میں کشمیر بنے گا پاکستان کے نعرے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں