The news is by your side.

سائفرتحقیقات: ایف آئی اے نے عمران خان کو کل طلب کر لیا

سائفر تحقیقات سے متعلق وفاقی تحقیقاتی ایجنسی (ایف آئی اے) نے سابق وزیراعظم عمران خان کو طلبی کا نوٹس جاری کر دیا۔

چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کو کل ایف آئی اے ہیڈکوارٹر میں طلب کیا گیا ہے۔ سابق وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کو بھی دوبارہ طلب کیا گیا ہے۔

سابق وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کو 3 نومبر کو ہیڈکوارٹر میں طلب کیا گیا ہے۔ اس سے قبل عمران خان کے سابق پرنسپل سیکرٹری اعظم خان کو بھی ایف آئی اے نے طلب کیا تھا۔

سابق وزیراعظم عمران خان، ساتھی وزرا، اور اعظم خان کے خلاف وفاقی کابینہ نے ڈپلومیٹک سائفر کے حوالے سے قانونی کارروائی کی باضابطہ منظوری دی تھی۔

کابینہ نے 30 ستمبر کو سائفر سے متعلق آڈیو لیک پر کابینہ کمیٹی تشکیل دی تھی، اس کمیٹی نے یکم اکتوبر کو منعقدہ اجلاس میں قانونی کارروائی کی سفارش کی تھی۔

کابینہ کمیٹی کی سفارشات کو سمری کی شکل میں کابینہ کی منظوری کے لیے پیش کیا گیا جس پر کابینہ نے سرکولیشن کے ذریعے کمیٹی کی سفارشات کی منظوری دی۔

کابینہ کمیٹی نے سفارش کرتے ہوئے کہا یہ قومی سلامتی کا معاملہ ہے جس کے قومی مفادات پر سنگین مضر اثرات مرتب ہوئے ہیں، اس لیے اس معاملے پر قانونی کارروائی لازم ہے۔

کمیٹی نے سفارش کی کہ ایف آئی اے سینئر حکام پر مشتمل کمیٹی تشکیل دے، اس کمیٹی میں انٹیلیجنس اداروں سے بھی افسران اور اہل کاروں کو ٹیم میں شامل کیا جا سکتا ہے۔ کمیٹی نے سفارش کی کہ ایف آئی اے ٹیم جرم کرنے والوں کے خلاف قانون کے مطابق کارروائی کرے۔

یاد رہے کہ ڈپلومیٹک سائفر سے متعلق عمران خان کی پہلی آڈیو 28 ستمبر کو منظرعام پر آئی تھی، جب کہ دوسری آڈیو 30 ستمبر کو منظر عام پر آئی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں