The news is by your side.

Advertisement

بھارت: انتہا پسندوں نے دلت نوجوان کو کھانا چھونے پر قتل کردیا

نئی دہلی: بھارتی ریاست مدھیہ پردیش میں غنڈوں نے ایک دلت نوجوان کو تشدد کر کے قتل کردیا، نوجوان کا جرم صرف اتنا تھا کہ اس نے اعلیٰ ذات کے افراد کے لیے بنائے گئے کھانے کو چھو لیا تھا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق واقعہ مدھیہ پردیش کے ضلع چھتر پور میں پیش آیا، جہاں ایک دلت نوجوان اعلیٰ ذات کے افراد کی تقریب میں شریک تھا، مذکورہ نوجوان کو وہاں صفائی کے لیے بلایا گیا تھا۔

تقریب کے دوران نوجوان نے وہاں رکھے کھانے سے اپنا کھانا نکالنا چاہا تو یہ بات اعلیٰ ذات کے لوگوں کو نہایت ناگوار گزری۔ چند انتہا پسند نوجوانوں نے لاٹھی اور ڈنڈے سے اس کی پٹائی شروع کردی۔

اعلیٰ ذات کے نوجوانوں نے دلت نوجوان کو اس قدر بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنایا کہ اس کی موت واقع ہوگئی۔

واقعے کے بعد 2 نوجوان موقع سے فرار ہوگئے۔

مقامی پولیس نے قتل کی دفعہ کے تحت مقدمہ درج کر لیا ہے، پولیس کا کہنا ہے کہ 2 ملزمان کے خلاف قتل اور ایس سی / ایس ٹی ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔

پولیس سپرنٹنڈنٹ سچن شرما کا کہنا ہے کہ ملزمان کی تلاش جاری ہے، جلد ہی دونوں پولیس کی گرفت میں آجائیں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں