دیامیر بھاشا ڈیم کے لئے فنڈ کا نیا نام ’سپریم کورٹ / پی ایم ‘ ہوگا
The news is by your side.

Advertisement

دیامر بھاشا ڈیم کے لیے فنڈ کا نیا نام ’سپریم کورٹ / پی ایم ‘ ہوگا

اسلام آباد : سپریم کورٹ آف پاکستان نے دیامر بھاشا ڈیم فنڈز کے نام میں تبدیلی کی اجازت دے دی، جس کے بعد دیامیر بھاشا ڈیم کے لئے فنڈ کا نیا نام سپریم کورٹ وزیراعظم ڈیم فنڈ ہوگا۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں چیف جسٹس کی سربراہی میں 4رکنی بینچ نے نے اسٹیٹ بینک کی جانب سے ڈیم فنڈ کا نام تبدیل کرنے سے متعلق درخواست پر سماعت کی۔

نمائندہ اسٹیٹ بینک نے بتایا کہ پہلے نام سپریم کورٹ دیامیر بھاشا ڈیم فنڈ تھا، وزارت خزانہ نے نام وزیراعظم چیف جسٹس ڈیم فنڈ کردیا ہے، جس پر چیف جسٹس نے کہا وزیراعظم نے فنڈ کا نام بدلنے کیلئے مجھ سے اجازت لی تھی اور کہا تھا اس فنڈ کو جوائن کرنا چاہتے ہیں۔

چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے وزیراعظم کا ایک مقام ہے، ہمیں اس پرکوئی اعتراض نہیں، نام بدلنے کی بینچ سے اجازت نہیں لی گئی تھی، ہم نے کہا فنڈز آنے چاہئیں، نام بےشک کوئی بھی ہو، ہمارا کوئی انا کا مسئلہ نہیں ہے۔

سپریم کورٹ نے ڈیم فنڈز کا نام تبدیل کرنے کی اجازت دے دی ، چیف جسٹس نے کہا پی ایم سلیش سپریم کورٹ فنڈ نام رکھنا چاہتے ہے تواعتراض نہیں ، اس میں سپریم کورٹ بطور ادارہ اور وزیراعظم بطور شخصیت ہوں گے، سپریم کورٹ اپنی نگرانی اور کاوش جاری رکھے گی۔

ایڈیشنل اٹارنی جنرل نیئررضوی نے کہا اکاؤنٹ کا نام تبدیل کرنے سے کچھ مشکلات آئیں گی، تمام اشتہارات میں اب فنڈ کا نام تبدیل کرنا پڑے گا، جس پر جسٹس اعجازالاحسن کا کہنا تھا کہ جو پرانے اشتہارات چل رہے ہیں، انہیں ایسے ہی چلنے دیں، نئے اشتہارات میں فنڈز کا نام تبدیل کرلیا جائے۔

نیئررضوی نے بتایا کہ ڈیم فنڈ میں عطیات کوٹیکس سےمستثنیٰ کردیاہے اور موبائل فون کمپنیوں کو بھی فنڈز کی تشہیر کا کہہ دیا ہے۔

چیف جسٹس نے حکم دیا کہ ڈیم فنڈز کا نام پی ایم سلیش سی جے نہیں بلکہ سپریم کورٹ سلیش پی ایم ہوگا، فنڈ کی رقم ٹیکس اور کٹوتی سے استثنیٰ سے متعلق بل پارلیمنٹ بھجوایا ہے، بل جب بھی منظور ہو اس کا اطلاق سابقہ تاریخ سے ہوگا۔

یاد رہے کہ 6 جولائی کو کالا باغ ڈیم کی تعمیر سے متعلق ہونے والی سماعت میں چیف جسٹس آف پاکستان نے پانی کی قلت کو دور کرنے کے لیے فوری طور پر دیامیر بھاشا اور مہمند ڈیموں کی تعمیر کے احکامات اور فنڈز قائم کرنے کا حکم بھی جاری کیا تھا۔

وزیراعظم پاکستان نے اپنے خطاب میں ڈیم بنانے کے لیے قوم سے مدد مانگی تھی اور پیغام میں کہا تھا پاکستان بہت سے مسائل کا شکار ہے مگر سب بڑا مسئلہ پانی کی کمی ہے، ڈیم بنانا ناگزیر ہوگیا ہے، ڈیم نہ بنائے تو 2025میں پاکستان میں خشک سالی شروع ہوجائے گی، پاکستان میں قحط پڑسکتا ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے اپیل کی تھی ڈیم بنانے کے لئے آج سے جہاد کرنا ہے، اوورسیز پاکستانی کم ازکم ایک ہزارڈالر ڈیم فنڈز میں بھیجیں۔چیف جسٹس اورپرائم منسٹر فنڈزکو ضم کیا جارہا ہے، یقین دلاتا ہوں قوم کے پیسے کی خود حفاظت خود کروں گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں