The news is by your side.

Advertisement

بیٹی کی فروخت ناکام، شہریوں نے ماں کو رنگے ہاتھوں پکڑ لیا

فیصل آباد: شہریوں نے ماں کے ہاتھوں بارہ سالہ بیٹی کی فروخت کی کوشش ناکام بناتے ہوئے خاتون اور اس کے داماد کو تشدد کا نشانہ بنانے کے بعد پولیس کے حوالے کر دیا گیا ۔

تفصیلات کے مطابق فیصل آباد کے علاقے جھنگ روڈ پر واقع ماڈل بازار میں رشید آباد کی ہائشی پروین نامی خاتون نے جمعے کی رات داماد کے ہمراہ مل کر اپنی بیٹی کو مبینہ طور پر ایک شخص کو فروخت کرنے کی کوشش کی۔

مقدس نے بازار پہنچنے ہی ماں سے ہاتھ چڑوا کر وہاں موجود شہریوں سے مدد طلب کی، متاثرہ لڑکی کے شور مچانے پر کار سوار (خریدار) جائے وقوعہ سے فرار ہوگیا تاہم لوگوں نے ماں اور داماد کو پکڑ کر چھان بین شروع کی۔

بعد ازاں کچھ لوگوں کی جانب سے دونوں کو تشدد کا نشانہ بنایا گیا اور پولیس کے پہنچنے پر انہیں مقامی افسران کے حوالے کردیا، جس کے بعد پولیس نے دونوں سے تفتیش شروع کردی ہے۔

اس موقع پر مقدس نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ’’میرے والد مقامی موٹر مارکیٹ میں سیکیورٹی گارڈ کی نوکری کرتے ہیں تاہم میری ماں مجھے دیڑھ لاکھ روپے میں فروخت کرنا چاہتی تھی‘‘۔

مقدس نے کہا کہ ’’میری والدہ مجھے جھوٹ بول کر یہاں تک لائی تاہم راستے میں صیح بات کا علم ہونے پر میں نے فرار ہونے کی کوشش کی تو میرے ساتھ زبردستی کی مگر بازار پہنچتے ہی میں نے شور کیا اور اپنی جان بچائی‘‘۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں