The news is by your side.

Advertisement

پاکستان کی پہلی فلم کی ہیروئن آشا پوسلے کی برسی

26 مارچ 1998ء کو پاکستان کی پہلی فلم ‘تیری یاد’ میں ہیروئن کا کردار نبھانے والی آشا پوسلے وفات پاگئی تھیں۔ آج ان کی برسی منائی جارہی ہے۔ آشا پوسلے کا اصل نام صابرہ بیگم تھا جن کے والد موسیقار کی حیثیت سے فلمی دنیا سے منسلک تھے۔

آشا پوسلے کا تعلق پٹیالہ سے تھا جہاں انھوں نے 1927ء میں آنکھ کھولی تھی۔ تقسیم سے قبل 1946ء میں فلم ‘کملی’ سے اپنے کیریئر کا آغاز کرنے والی آشا پوسلے نے ہیروئن کے علاوہ بڑے پردے پر کئی فلموں میں منفی کردار بھی ادا کیے۔ آشا پوسلے کے والد ماسٹر عنایت علی ناتھ ہی نہیں‌ ان کی ایک بہن رانی کرن بھی اداکارہ اور دوسری کوثر پروین بطور گلوکارہ فلمی دنیا سے منسلک رہیں۔

7 اگست 1948ء کو لاہور کے پربت تھیٹر میں نمائش کے لیے پیش کی گئی ملک کی پہلی فلم میں ہیروئن کا کردار نبھانے والی آشا پوسلے نے زندگی کے آخری ایّام انتہائی کس مپرسی کے عالم میں بسر کیے اور گڑھی شاہو، لاہور میں انتقال کیا۔ انھیں‌ متعدد اعزازات سے نوازا گیا تھا جن میں خصوصی نگار ایوارڈ بھی شامل تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں