The news is by your side.

Advertisement

فنِ موسیقی کے استاد امید علی خان کا یومِ وفات

آج پاکستان میں کلاسیکی موسیقی اور گائیکی میں ممتاز استاد امید علی خان کی برسی ہے۔ وہ 14 جنوری 1979ء کو وفات پاگئے تھے۔

استاد امید علی خان 1914ء میں امرتسر کے ایک گائوں میں پیدا ہوئے تھے۔ ان کا تعلق موسیقی میں مشہور گوالیار گھرانے سے تھا۔ امید علی خان کے والد استاد پیارے خان اور دادا استاد میران بخش اپنے زمانے کے مشہور گلوکار تھے۔

موسیقی اور گائیکی کے حوالے سے استاد امید علی خان کی تعلیم و تربیت میں ماحول کا بڑا اثر تھا۔ انھوں نے موسیقی کی ابتدائی تعلیم اپنے والد سے حاصل کی پھر پٹیالہ گھرانے کے استاد عاشق علی خان کی شاگردی اختیار کر لی۔ یوں امید علی خان نے گائیکی میں گوالیار اور پٹیالہ گھرانوں کے رنگ اور خصوصیات کو اپنایا اور اس فن میں مہارت حاصل کرتے چلے گئے۔

استاد پیارے خان ایک زمانے میں ریاست خیرپور سے وابستہ ہوگئے تھے اور استاد امید علی خان کی عمر کا خاصا حصّہ سندھ دھرتی پر گزرا۔

امید علی خاں سے فنِ موسیقی اور گائیکی میں اکتساب کرنے والوں میں منظور حسین، فتح علی خاں اور حمید علی خان نمایاں ہوئے۔

استاد امید علی خان لاہور میں آسودۂ خاک ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں