ملتان: ماں بیٹی کے قتل کا معمہ حل نہ ہو سکا -
The news is by your side.

Advertisement

ملتان: ماں بیٹی کے قتل کا معمہ حل نہ ہو سکا

ملتان: پنجاب کے شہر ملتان کے علاقے نند پور میں ماں بیٹی کو کسی نے مارا یا انھوں نے خود کشی کی، معمہ حل نہ ہو سکا۔

تفصیلات کے مطابق اٹھارہ سال لڑکی صائمہ کے بھائی نے بتایا کہ مبینہ زیادتی کے بعد ماں بہن نے خود کشی کی ہے، جب کہ اہل علاقہ کا کہنا ہے بھائیوں نے غیرت کے نام پر جان لی۔

اہل علاقہ کا کہنا ہے بھائیوں نے غیرت کے نام پر جان لی۔

پولیس کے مطابق ملتان کی نند پور بستی میں گزشتہ روز گھر سے ماں بیٹی کی پھندا لگی لاش ملی۔

بھائی نے دعویٰ کیا کہ اٹھارہ سال کی بہن صائمہ کو اغوا کیا گیا تھا جس کے بعد اسے زیادتی کا نشانہ بنایا گیا، ملزم انصر کی دھمکیوں سے تنگ آ کر والدہ اور بہن نے خود کشی کی۔

دوسری طرف اہلِ علاقہ نے کچھ اور کہانی سنائی، بتایا گیا کہ صائمہ اور اس کی 47 سالہ ماں سے مبینہ طور پر زیادتی ہوئی تھی جس پر بھائیوں نے غیرت کے نام پر انھیں قتل کر دیا۔

یہ بھی پڑھیں:  ملتان: مدرس کے ہاتھوں تشدد کا شکاربننے والی طالبہ چل بسی

پولیس نے ماں بیٹی کی لاشوں کو تحویل میں لے کر تحقیقات شروع کر دیں۔

یاد رہے کہ چند ماہ قبل ملتان میں استاد کے ہاتھوں بد ترین تشدد کا نشانہ بننے والی کم سن طالبہ سات روز تک زندگی اور موت کی کشمکش میں مبتلا رہنے کی بعد زندگی کی بازی ہار گئی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں