The news is by your side.

حکومت عمران خان سے بات کرنے کیلیے تیار ہے، خواجہ آصف

وزیر دفاع خواجہ آصف نے کہا ہے کہ پاکستان اور عوام کی خاطر ذاتی انا آڑے نہیں آئے گی، عمران خان سمیت سب سے بات چیت کیلیے تیار ہیں۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق وزیر دفاع خواجہ آصف نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت ہمیشہ بات چیت کے لیے تیار رہی ہے، بطور اپوزیشن میثاق معیشت کے لیے دعوت دی تھی اور اس کے لیے آج بھی تیار ہیں، عمران خان کو تو صرف اقتدار چاہیے، لیکن ہم پاکستان اورعوام کی خاطر ذاتی انا آڑے نہیں آنے دیں گے اور عمران خان سمیت سب سے بات چیت کیلیے تیار ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ملک کا بڑا حصہ اس وقت سیلاب میں ڈوبا ہوا ہے، متاثرین کو تعاون چاہیے، اس وقت اتحاد کی ضرورت ہے لیکن پی ٹی آئی مسلسل ملک میں عدم استحکام کیلئے لگی ہوئی ہے، جان بوجھ کر مختلف معاملات کو بنیاد بنا کر سیاسی عدم استحکام پیدا کیا جا رہا ہے، تاہم ملک میں انتشار پیدا کرنے کی اس کی تمام کوششیں ناکام بنائی جائیں گی، جب اقتدار میں آئے تب سے اب تک حالات بہتر ہیں، مہنگائی کو کنٹرول کرنے کیلئے بھی اقدامات کر رہے ہیں۔

وزیر دفاع نے کہا کہ وزیراعظم شہباز شریف کا دورہ ثمرقند کامیاب رہا ہے، اس دورے میں 10 سربراہان مملکت سے ملاقاتیں ہوئیں، کئی سرکاری اور غیر رسمی ملاقاتیں بھی ہوئیں، اس موقع پر پاکستان میں سیلاب کے حوالے سے بات چیت توجہ کا مرکز رہی۔

خواجہ آصف نے بتایا کہ وزیراعظم شہباز شریف کی چین، روس، ایران اور ترکیہ کے صدور سمیت دیگر سے بار آور ملاقاتیں ہوئیں، دنیا اس وقت پاکستان کی مدد کیلئے تیار ہے، تمام ممالک پاکستان سے تعاون کا یقین دلایا۔ چینی صدر کی دعوت پر شہباز شریف نومبر کے پہلے ہفتے میں چین کا دورہ کریں گے جب کہ پیوٹن سے ملاقات کیلیے روس بھی جائیں گے، روسی صدر پیوٹن نے یوکرین پر پاکستان کے موقف کو سراہا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ اس دورے میں ایس سی او فورم پر موجود سب لیڈرز نے نواز شریف کو تہنیتی پیغام بھجوائے، سب کو نواز شریف کے اقدامات اور وژن سے دلچسپی تھی، چین پاکستان کے ساتھ بھرپور تعاون کیلئے تیار ہے، چینی صدر نے شہباز شریف سے سی پیک کی تیزی پر بات کی، ریل پروجیکٹ کیلئے بھی دلچسپی ظاہر کی۔

 

وزر دفاع کا کہنا تھا کہ دورہ ثمرقند میں وزیراعظم شہباز شریف نے ماحولیاتی تبدیلیوں کی بار بار بات کی اور سب کو باور کرایا کہ پاکستان اوزون لیئر کی خرابی کا ذمے دار نہ ہوتے ہوئے بھی زیادہ متاثر ہوا، یو این سیکرٹری جنرل پاکستان کیلئے بات کر رہے ہیں، توقع ہےعالمی برادری پاکستان کیساتھ تعاون کرے گی۔

خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ وزیراعظم شہباز شریف آج برطانیہ جائیں گے جہاں وہ ملکہ الزبتھ دوم کی آخری رسومات میں شرکت کریں گے، وہاں سے شہباز شریف اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی اجلاس میں شرکت کیلیے نیویارک روانہ ہوجائیں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں