The news is by your side.

Advertisement

عدالتی حکم پر کراچی میں مکہ ٹیرس کا غیرقانونی حصہ توڑنے کا آغاز، مکین سراپا احتجاج

کراچی : سندھ ہائی کورٹ کے حکم پر ایس بی سی اے نے  مکہ ٹیرس کا غیر قانونی حصہ توڑنے کا کام شروع کیا تو عمارت کےمکین سراپا احتجاج بن گئے۔

تفصیلات کے مطابق سندھ ہائی کورٹ کے حکم پراکبر روڈ پر مکہ ٹیرس کو توڑنے کا آغاز کردیا گیا ، 4منزلہ عمارت کےکچھ حصے توڑنے کے دوران ایس بی سی اے کو مزاحمت سامنا رہا۔

14فلیٹوں پر مشتمل مکہ ٹیرس کے مکینوں گھروں سے باہر نکل آئے اور سراپااحتجاج بن گئے، مزاحمت کے باعث ایس بی سی اے کی ٹیم نے کام روک دیا۔

ایس بی سی اے کے مطابق کہ ٹیرس کے عقبی حصے پر 6فٹ غیر قانونی تعمیرات توڑ رہے ہیں، توڑے جانے والے حصوں میں بالکونی اورواشنگ ایریا شامل ہے، دوعمارتوں کے درمیان 8فٹ کا فاصلہ ہونا چاہیے تھا۔

میکنوں کا کہنا ہے کہ عدالت سے ایک ماہ کا اسٹے لیا ہوا ہے مگر دو دن میں ہی توڑنے کا کام شروع کردیا گیا ہے اور کے الیکٹرک کی جانب سے عمارت کی بجلی منقطع کردی گئی ہے۔

مکینوں نے متبادل جگہ ملنے تک مہلت دینے کی اپیل کی تاہم ایس بی سی اے نے مہلت دینے سے انکار کردیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں