تاریخی شہر پومپئی کی تباہی کے ہولناک مناظر -
The news is by your side.

Advertisement

تاریخی شہر پومپئی کی تباہی کے ہولناک مناظر

کیا آپ تاریخی شہر پومپئی اور اس کی تباہی کے بارے میں جانتے ہیں؟

حضرت داؤد علیہ السلام کے زمانے سے آباد شہر پومپئی موجودہ اٹلی کے شہر نیپلز کے قریب ایک قدیم رومی شہر تھا۔

اس خوبصورت شہر میں پانی کے تالاب، کلب، بیکریاں، کشادہ سڑکیں، واٹر سپلائی کی سکیم، لائبریری، کمیونٹی سنٹر، اسپتال، گھوڑے باندھنے کے جدید اصطبل، دو منزلہ مکانات اور مکانوں کے پیچھے چھوٹے چھوٹے لان اور ان میں نصب فواروں نے اس شہر کو جنت بنا دیا تھا۔

یہ دنیا کا پہلا شہر تھا جس میں زبیرا کراسنگ شروع ہوئی تھی۔ یہیں سے کریم کیک ایجاد ہوا تھا اور یہیں سے اجتماعی غسل خانوں یا حمام کے تصور نے جنم لیا تھا۔

سنہ 79 عیسوی میں اس قصبے کے قریب واقع ویسویس کے آتش فشاں پہاڑ سے لاوا پھوٹ پڑا جس نے چند دن میں اس شہر کو صفحہ ہستی سے مٹا دیا۔ اس دور کا انتہائی ترقی یافتہ یہ شہر 13 سے 20 فٹ راکھ کے نیچے دفن ہوگیا۔

آج بھی جب پومپئی کی باقیات دریافت ہوتی ہیں تو وہاں کے رہنے والوں کی لاشیں بے گور و کفن اسی حال میں ملتی ہیں جس میں وہ اپنے آخری وقت میں موجود تھے۔

کئی گھروں میں روزمرہ معمولات زندگی کے آثار بھی ملتے ہیں جو جوں کے توں ایسے ہی رکے ہیں جیسے کسی نے جادو کے زور سے انہیں روک دیا ہو۔

کچھ عرصہ قبل شہر پومپئی کی تباہی کی ایک تصوراتی ویڈیو آسٹریلیا کے شہر میلبرن میں ایک نمائش میں پیش کی گئی جسے چند دن میں لاکھوں افراد نے دیکھا۔

آج ہم آپ کو بھی وہ ویڈیو دکھانے جارہے ہیں جسے دیکھ کر آپ اپنا دل تھام لیں گے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں