The news is by your side.

Advertisement

کچرا اٹھانے کی ذمہ داری ڈی ایم سی کی ہے، سعید غنی

کراچی: وزیر بلدیات سندھ سعید غنی نے کہا ہے کہ شہر سے کچرا اٹھانے کی ذمہ داری ڈسٹرکٹ میونسپل کارپوریشن کی ہے، بلدیاتی نظام سے متعلق غلط باتیں پھیلائی جارہی ہیں۔

اے آر وائی نیوز کی خصوصی ٹرانسمیشن سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر بلدیات کا کہنا تھا کہ بلدیاتی نظام کنفیوژ نہیں البتہ اس سے متعلق غلط باتیں پھیلائی جارہی ہیں، شہر سے پانی کی نکاسی کا کام سالڈ ویسٹ میجمنٹ کا نہیں ہے۔

انہوں نے بتایا کہ کراچی کے 6 ڈسٹرکٹس ہیں جن کا کچرا اٹھانے کی ذمہ داری ڈی ایم سیز کے پاس ہے، ڈی ایم سی کورنگی اپنا کچرا خود اٹھارہی ہے، اسی طرح ضلع سینٹرل اور کورنگی نے قراردادیں پاس کرلیں، ایک ماہ میں سالڈ ویسٹ مینیجمنٹ نے ڈسٹرکٹ سینٹرل سے 45 ہزار ٹن کچرا اٹھایا۔

مزید پڑھیں: آرمی چیف اور وزیراعظم کراچی کے مسائل حل کرنے کے لیے کردار ادا کریں، مصطفیٰ کمال

وزیربلدیات کا کہنا تھا کہ معاہدے کے تحت ڈی ایم سی کی صفائی کے ملازم ویسٹ مینیجمنٹ کو ٹرانسفر ہوجاتے ہیں، گزشتہ برس کے ایم سی کو نالوں کی صفائی کیلئے50کروڑروپے دیئے گئے کیونکہ شہر میں 38بڑے نالوں کے صٖفائی کی ذمہ داری کے ایم سی کی  ہے اُس کے باوجود سندھ حکومت نے جولائی میں نالوں سے10ہزارٹن کچرااٹھایا۔ اُن کا کہنا تھا کہ نالوں کے صفائی کرکے گندگی ان کے ساتھ ہی رکھ دی جاتی ہے، ویسٹ سالڈمینجمنٹ بورڈ نے اس سےمتعلق کئی درخواستیں لکھیں مگر کوئی اقدامات نہیں ہوئے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں