The news is by your side.

Advertisement

پی ٹی ایم کے الزامات، سوشل میڈیا مہم پر ڈی جی آئی ایس پی آر کا ردعمل

راولپنڈی: پی ٹی ایم کے الزامات اور سوشل میڈیا پر مہم پر ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ کیا ہم بھارت کی فوج ہیں، ہمارے دلوں میں بھی خون دوڑتا ہے، ہم تو بول بھی نہیں رہے۔

تفصیلات کے مطابق ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے پریس بریفنگ کے بعد گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کیا ہم دوسرے درجے کے شہری ہیں؟ پی ٹی ایم ویب سائٹ پر آرمی چیف، میری جو تصاویر ہے کیا وہ دیکھی؟ کیا تین دن کی جنگ میں محسن داوڑ کنٹرول لائن پر فورسز کے ساتھ کھڑا ہوا، قربانیاں بھی دیں، الزام بھی لگتا ہے، دہشت گردوں کو اسپانسر کرتے ہیں۔

ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ اپنی حکومت اور سیکیورٹی فورسز پر اعتماد کریں، ہم نے وہ کام کرنے ہیں، جس سے نظام ٹھیک ہو، حکومت نے دینی مدارس قومی دھارے میں لانے کے لیے 2.7 ارب جاری کردئیے۔

مزید پڑھیں: بھارت ذہن میں رکھے ، یہ 1971 نہیں، ڈی جی آئی ایس پی آر

میجر جنرل آصف غفور نے کہا کہ دینی مدارس کو قومی دھارے میں لانے کا کام حکومت کرے گی، کچھ دہشت گرد گروپس اوپن بارڈر کی وجہ سے ایران، پاکستان آجاتے ہیں، ایرانی سرحد پر سیکیورٹی فورسز کی تعداد بڑھا دی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ایف سی ساؤتھ کو پاک ایران سرحد کی سیکیورٹی کی ذمہ داری دی ہے، بعض مغوی ایرانی اہلکاروں سے متعلق کوئی اطلاع نہیں ہے، ہم اپنے پاؤں پر کھڑے ہیں اور کھڑے رہیں گے۔

میجر جنرل آصف غفور نے کہا کہ اب ہمیں صاحب اور صاحبہ سے آگے نکلنا ہوگا، پاک فوج کی جہاں ضرورت ہوگی ہم مدد دیں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں