ڈکیتی کی کوشش ناکام بنانے والی کراچی کی بہادر بیٹی کو ڈی جی رینجرز کی شاباش karachi
The news is by your side.

Advertisement

کراچی: ڈکیتی کی کوشش ناکام بنانے والی بہادر بیٹی کو ڈی جی رینجرز کی شاباش

کراچی: ڈی جی رینجرز سندھ میجر جنرل سعید نے گلشن حدید میں موبائل چھیننے کی واردات ناکام بنانے والی لڑکی مریم نادر کو جرات اور بہادری کا مظاہرہ کرنے پر شاباش دی اور اعزازی شیلڈ بھی پیش کی۔

تفصیلات کے مطابق چار روز قبل کراچی کے علاقے گلشن حدید میں اسٹریٹ کرائم (موبائل چھیننے) کے دوران نوجوان لڑکی مریم نادر نے جرات اور بہادری کی مثال قائم کرتے ہوئے نہ صرف ڈکیتی کی واردات کو ناکام بنایا بلکہ مسلح افراد کو زخمی بھی کیا جس کے بعد اہل علاقہ نے انہیں پولیس کے حوالے کیا۔

مریم نادر کے مطابق وہ جب اپنے رشتے دار کے گھر گلشن حدید پہنچیں تو اسی دوران موٹرسائیکل پر تعاقب کرتے ہوئے 2 نوجوان اُن کی گاڑی کے سامنے آئے اور پستول تان کر موبائل دینے کا مطالبہ کیا۔

مزید پڑھیں: کراچی کی بہادر بیٹی نے موبائل چھیننے کی کوشش ناکام بنادی، ڈاکو گرفتار

فیڈرل بی ایریا کی رہائشی کراچی کی بہادر لڑکی نے اپنا موبائل مسلح افراد کو دیا اور اُس کے بعد دلیری کے ساتھ اپنی کار میں ملزمان کا تعاقب کرتے ہوئے اپنی گاڑی اُن کی موٹر سائیکل سے ٹکرا دی جس کے نتیجے میں دونوں ڈکیت زمین پر گر گئے اور انہیں اہل علاقہ نے تشدد کے بعد پولیس کے حوالے کیا۔

ترجمان رینجرز کے مطابق خاتون کی جرات اور بہادری پر انہیں خراجِ تحسین پیش کرنے کے لیے ڈی جی رینجرز میجر جنرل سعید نے رینجرز ہیڈکوارٹرز میں مریم نادر اور اُن کے اہل خانہ سے ملاقات کی اور مریم نادر کو اعزازی شیلڈ پیش کی۔ اس موقع پر ڈی جی رینجرز کا کہنا تھا کہ ’خاتون کا جرات مندانہ اقدام ہم سب کے لیے ایک مثال ہے‘۔

خاتون کے اہل خانہ نے ڈی جی رینجرز کی جانب سے عزت افزائی پر اُن کا شکریہ ادا کیا۔

واضح رہے کہ مریم نادر 22 دسمبر کو گلشن حدید میں واقع اپنے رشتے دار کے گھر پہنچی تو دو مسلح ملزمان اُن کی گاڑی کے سامنے آئے اور پستول تان کر موبائل دینے کا مطالبہ کیا۔

خاتون نے اے آر وائی سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا تھا کہ انہوں نے اپنا موبائل مذکورہ افراد کو تھمایا اور پھر اُن کا تعاقب کرنے لگیں جیسے ہی موقع غنیمت جانا اُسی لمحے تیز رفتار گاڑی موٹرسائیکل پر مار دی جس کے نتیجے میں دونوں ڈاکو زمین پر گر گئے اور پھر انہیں اہل علاقہ نے پکڑ کر پولیس کے حوالے کیا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں