The news is by your side.

Advertisement

بچوں کو گاڑی میں بھول جانے پر 10 لاکھ درہم جرمانہ اور 10 سال قید کی سزا

دبئی: متحدہ عرب امارات میں بچوں کو گاڑی میں بھول جانے پر ایک ملین درہم جرمانہ اور 10 سال قید کی سزا بھگتنا پڑے گی۔

عرب میڈیا کے مطابق والدین اور اسکول بس ڈرائیور کی جانب سے گاڑی میں بچوں کو بھول جانے کے سبب بچوں کی اموات ہوئی تھی جس کے بعد امارات میں چائلڈ رائٹس قانون کے تحت سزا اور جرمانے کا اعلان کیا گیا ہے۔

شارجہ میں چند روز قبل والد کی جانب سے دو سالہ بچے کو گاڑی میں بھولنے کے سبب معصوم بچہ زندگی و موت کی کشمکش میں اسپتال میں زیر علاج ہے۔

رپورٹ کے مطابق والد بچے کو لے کر جمعہ کی نماز پڑھنے گئے اور جب واپس آئے تو گاڑی لاک کرکے گھر کے اندر چلے گئے چند گھنٹے بعد جب انہیں احساس ہوا کہ بچہ موجود نہیں ہے تو وہ گاڑی کی جانب سے روانہ ہوئے، معصوم بچے کو بیہوشی کی حالت میں اسپتال منتقل کیا گیا۔

مزید پڑھیں: دبئی کی اسکول بس میں بند ہوجانے سے 6 سالہ بچہ جاں بحق

پولیس کے مطابق بچے کو القاسم اسپتال میں طبی امداد دی جارہی ہے لیکن اس کی حالت تشویش ناک ہے، واقعے کی تحقیقات کا آغاز کردیا ہے بظاہر اس میں والد کی لاپرواہی ظاہر ہورہی ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ ماہ دبئی کی اسکول بس میں بند ہوجانے سے ایک بچہ زندگی کی بازی ہار گیا تھا، فرحان فیصل اسلامیہ مدرسے میں تحفیظ القرآن کی تعلیم حاصل کررہا تھا بچے کی موت بس میں شدید حبس کے باعث ہوئی۔

یاد رہے کہ اکتوبر 2014 میں بھی ابوظبی میں 4 سالہ بھارتی بچی اسکول بس کا دروازہ بند ہونے کے باعث زندگی کی بازی ہار گئی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں