The news is by your side.

Advertisement

کیا آپ ان مخفف الفاظ کے معنی جانتے ہیں؟

ایس ایم ایس، اے ایم، پی ایم، جی پی ایس اور اس جیسے لاتعداد مخفف الفاظ ہماری زندگی کا حصہ بن چکے ہیں لیکن ہم میں سے بہت کم افراد ان الفاظ کا اصل مطلب یا ان کے مکمل الفاظ جانتے ہوں گے۔

آج ہم آپ کو بتاتے ہیں کہ ہماری روزمرہ زندگی میں استعمال ہونے والے ان مخفف الفاظ کا کیا مطلب ہے۔


جی پی ایس

راستے کی سمت کا تعین کرنے کے لیے استعمال کیا جانے والے لفظ جی پی ایس گلوبل پوزیشننگ سسٹم ہے۔


اے ایم ۔ پی ایم

دنیا بھر میں دن اور رات کا تعین کرنے کے لیے اے ایم اور پی ایم کا استعمال کیا جاتا ہے۔ ان کا مطلب ہے اینٹی میریڈیم (دوپہر سے قبل) اور پوسٹ میریڈیم (دوپہر کے بعد)۔


ایس ایم ایس

واٹس ایپ کی ایجاد سے قبل ٹیکسٹ مسیجنگ یا ایس ایم ایس ہی رابطے کا آسان ذریعہ تھا۔ اس کا مطلب ہے شارٹ میسج سروس۔


وائرس

کمپیوٹر کو نقصان پہنچانے والا وائرس دراصل وائٹل انفارمیشن ریسورس انڈر سیز کا مخفف ہے۔


ای جی

انگریزی زبان کے جملوں میں استعمال کیا جانے والا لفظ ای ۔ جی ’مثال کے طور پر‘ کے لیے استعمال ہوتا ہے۔ اس کا اصل مطلب ہے ایگزیمپلی گریشیا جو لاطینی زبان کا لفظ ہے۔


آئی ای

انگریزی زبان میں ایک اور لفظ آئی ای (آئی ڈی ۔ ای ایس ٹی) کا مطلب ہے ’وہ یہ کہ‘۔ یہ مخفف کسی چیز کی وضاحت کرنے کے لیے استعمال کیا جاتا ہے۔


سی سی ۔ بی سی سی

ای میل بھیجنے کے دوران آپ کو ایک آپشن سی سی اور بی سی سی نظر آتا ہے۔ سی سی کا مطلب کاربن کاپی اور بی سی سی کا مطلب بلائنڈ کاربن کاپی ہے۔

یہ آپشن ایک سے زائد افراد کو بیک وقت ای میل بھیجنے کے لیے استعمال کیا جاتا ہے۔

فرق صرف اتنا ہے کہ سی سی میں لکھے جانے والے نام کا ای میل میں موجود ہر شخص کو علم ہوگا۔ جبکہ بی سی سی میں درج کیے جانے والے نام کے بارے میں نہ تو کسی دوسرے شخص کو (ای میل میں موجود) علم ہوگا اور نہ خود اس شخص کو کہ اسے اور کتنے افراد کے ساتھ یہ ای میل کی گئی ہے۔


پی ایس

آپ نے اکثر چند پیراگرافس پر مشتمل کسی مضمون کے آخر میں پی ایس لکھا دیکھا ہوگا۔ اس کا مطلب ہوتا ہے پوسٹ اسکرپٹ۔

مضمون ختم ہونے کے بعد اگر کوئی ضمنی بات شامل کرنی ہو تو اسے پی ۔ ایس ۔ لکھ کر لکھا جاتا ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں