The news is by your side.

Advertisement

نوازشریف کی نااہلی سے سسٹم کو کوئی خطرہ نہیں، بلاول بھٹو

اسلام آباد: پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ پاناما فیصلے میں نااہلی کے بعد نوازشریف کو جمہوریت یاد آئی، مسلم لیگ ن تاثر دینے کی کوشش میں ہے کہ جمہوریت کو خطرہ ہے مگر ایسی کوئی بات نہیں ہے۔

اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بلاول بھٹو نے کہا کہ پاناما لیکس عالمی ادارے کی رپورٹ ہے اس لیے عدالت نے مکمل تحقیق کے بعد ہی نوازشریف کے خلاف فیصلہ دیا، میاں صاحب جب بھی اقتدار سے جاتے ہیں انہیں جمہوریت یاد آجاتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ نوازشریف کی ریلی اپنے آپ کو بچانے کے لیے ہے، نااہلی سے جمہوری سسٹم کو کوئی خطرہ نہیں سابق وزیراعظم بلاوجہ واویلا کررہے ہیں، پیپلزپارٹی نظریاتی سیاست کرتے ہوئے نوازشریف کو کبھی چھپنے نہیں دے گی کیونکہ میاں صاحب ذوالفقار علی بھٹو اور بی بی شہید کا نام لے کر چھپنا چاہتے ہیں۔

بلاول نے کہا کہ پیپلزپارٹی ہمیشہ نظریاتی سیاست کرتی ہے اور گالی گلوچ کی سیاست پر یقین نہیں رکھتی، ہم اپنی نظریاتی سیاست کو آئندہ بھی جاری رکھیں گے کیونکہ ہم اپنے فیصلے خود کرتے ہیں۔

پی پی چیئرمین نے کہا کہ پیپلزپارٹی نظریاتی سیاست کی بنیاد پر آئندہ انتخابات میں بھرپور حصہ لے گی، ہم گالم گلوچ اور الزامات کی نہیں بلکہ پارلیمنٹ کو مضبوط کرنے کے لیے سیاست کریں گے۔

پیپلزپارٹی کے چیئرمین نے نوازشریف کے پروٹوکول کی ٹکر سے جاں بحق ہونے والے بچے کی موت پر مذمت کی اور مزید کہا کہ نوازشریف مشکل میں ہیں تو وہ مدد کے لیے رابطہ کرتے ہیں اگر انہوں نے ایسا کیا تو میں فون نہیں اٹھاؤں گا اور کسی کاغذ پر دستخط بھی نہیں کروں گا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں