The news is by your side.

Advertisement

نوازشریف کا علاج پاکستان میں ممکن ہے‘پروفیسرڈاکٹرمحمود ایاز

لاہور: پروفیسر ڈاکٹر محمود ایاز کا کہنا ہے کہ نوازشریف کے تمام امراض کا علاج پاکستان میں ہوسکتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق لاہور میں نواز شریف کے طبی معائنے پرتشکیل میڈیکل بورڈ کے سربراہ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ نوازشریف کے بارے میں حتمی پوزیشن پر نہیں پہنچ پائے۔

ڈاکٹر محمود ایاز نے کہا کہ نوازشریف کی ٹیسٹ رپورٹس میڈیکل بورڈ کے سامنے ہیں، تمام رپورٹس پر مشاورت جاری ہے، رپورٹس کی روشنی میں نوازشریف کے بارے میں فیصلہ کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ نوازشریف کا علاج پاکستان میں ممکن ہے، دل کے معاملے پر ماہرامراض قلب کی خدمات حاصل کرلی گئی ہیں۔

پروفیسر ڈاکٹر محمود ایاز نے کہا کہ نوازشریف کو بیرون ملک علاج کے لیے بھیجنے کا کوئی فیصلہ نہیں ہوا۔

سزایافتہ نوازشریف کو ہارٹ اٹیک نہیں ہوا، میڈیکل رپورٹ میں تصدیق

مسلم لیگ ن کے قائد نوازشریف کے سروسز اسپتال میں ہوئے تمام میڈیکل ٹیسٹ کی رپورٹ کلیئر قرار دی گئی ہیں، اس سے قبل جناح اسپتال بورڈ کی جانب سے کیا گیا ٹروپ آئی ٹیسٹ پازیٹو آیا تھا۔

یاد رہے کہ دو روز قبل نوازشریف کو ڈاکٹروں کی ہدایت پر کوٹ لکھپت جیل سے سروسز اسپتال منتقل کیا گیا تھا جہاں ان کے مختلف ٹیسٹ ہوئے تھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں