The news is by your side.

Advertisement

جوبائیڈن یوکرین کے بجائے اپنے اسکولوں کے بچوں کو محفوظ بنائیں، ٹرمپ

واشنگٹن : سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ ملک کے بچوں کو اسکولوں میں فائرنگ سے بچانے کے لیے مزید سرمایہ کاری کی ضرورت ہے۔

ٹرمپ نے یہ بات حال ہی میں امریکی کانگریس کی طرف سے منظور کیے گئے 40 بلین ڈالر کے یوکرین امدادی پیکج کا حوالہ دیتے ہوئے کہی۔

ہیوسٹن، ٹیکساس صوبے میں نیشنل رائفل ایسوسی ایشن کے سالانہ کنونشن سے خطاب کے دوران انہوں کہا کہ جہاں امریکہ یوکرین کو 40 بلین ڈالر کا امدادی پیکج فراہم کرسکتا ہے تو پہلے اسے اپنے بچوں کو محفوظ رکھنے کے لیے ہرممکن کوشش کرنی چاہیے۔

سابق صدر ٹرمپ کا کہنا تھا کہ ہم نے عراق اور افغانستان میں کھربوں ڈالر خرچ کیے لیکن بدلے میں کچھ نہیں ملا، اس سے پہلے کہ ہم باقی دنیا کو بنائیں، ہمیں اپنے بچوں کے لیے ملک میں محفوظ اسکول بنانا چاہیے۔

ٹرمپ نے کہا کہ ایسے امریکیوں کو بندوق رکھنے کی اجازت دی جانی چاہیے جو مہذب ہوں۔ انہوں نے ٹیکساس کے ایک ایلیمنٹری اسکول میں طلباء کے ایک گروپ پر فائرنگ کو جنگلی اور وحشیانہ ظلم قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس واقعے نے ہر امریکی کے ضمیر کو جھنجھوڑ کر رکھ دیا ہے۔

قابل ذکر بات یہ ہے کہ فائرنگ کے اس واقعہ میں 19 بچے اور دو اساتذہ ہلاک ہوئے تھے۔ کوویڈ 19 کی وجہ سے ملک کے سب سے طاقتور "گن لابی گروپ” نیشنل رائفل ایسوسی ایشن کی سالانہ کانفرنس دو سال بعد منعقد ہو رہی ہے۔

ٹیکساس قتل عام کے تناظر میں ٹیکساس کے گورنر گریگ ایبٹ اور لیفٹیننٹ گورنر ڈین پیٹرک دونوں نے کنونشن کا حصہ بننے سے انکار کر دیا تھا، پیٹرک نے جمعہ کو کہا کہ میں نہیں چاہتا کہ میری موجودگی خاندان اور یووالڈے میں رہنے والوں کے لیے درد یا غم کا باعث بنے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں