The news is by your side.

Advertisement

اب میں‌ وائٹ ہاوس میں‌ نہیں رہوں گا، ٹرمپ کا بڑا فیصلہ

واشنگٹن : امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے زیادہ ٹیکس سے بچنے کےلیے اپنی رہائش گاہ نیویارک سے فلوریڈا منتقل کرلی ہے۔

تفصیلات کے مطابق ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے سرکٹ کورٹ میں جمع کرائے گئے کاغذات کے ذریعے پتہ چلا کہ امریکی صدر نے اپنی ذاتی رہائش گاہ تبدیل کرلی ہے۔

ڈونلڈ ٹرمپ نے ستمبر کے آخر میں نیویارک سے فلوریڈا کے فام بیچ میں ذاتی رہائش گاہ بناکر سکونت اختیار کرلی تھی۔

امریکی صدر نے اپنے ٹوئٹ میں رہائش گاہ کی تبدیلی کے حوالے سے بتایا کہ مجھے ذاتی رہائش گاہ نیو یارک سے فلوریڈا منتقل کرنے کا فیصلہ کرتے ہوئے برا لگا لیکن نیو یارک کو سالانہ لاکھوں ڈالر دیئے، پھر بھی میرے ساتھ وہاں برا سلوک کیا گیا۔

ان کا کہنا تھا کہ بطور صدر ہمیشہ نیویارک کے عوام کی مدد کے لیے حاضر رہوں گا اور نیویارک کے لیے ہمیشہ دل میں ایک خاص مقام برقرار رہے گا۔

ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ اب میں اور میری فیملی وائٹ ہاﺅس کی جگہ فلوریڈا کے پام بیچ میں مستقل رہائش اختیار کریں گے۔

امریکی صدر کے قریبی شخص نے بتایا کہ ڈونلڈ ٹرمپ نے ٹیکس کی وجہ سے اپنی رہائش گاہ نیویارک سے فلوریڈا منتقل کرنے کا فیصلہ کیا کیونکہ فلوریڈا میں انکم ٹیکس اکٹھا نہیں جاتا۔

رپورٹ کے مطابق ٹرمپ کے قریبی شخص کا کہنا تھا کہ امریکی صدر ٹیکس کے حوالے سے مین ہٹن ڈسٹرکٹ کے اٹارنی کے کیس کے باعث شدید غصے میں تھے تاہم یہ معلوم نہیں ہو سکا کہ رہائش گاہ کی تبدیلی سے اس کیس پر کیا اثر پڑے گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں