The news is by your side.

Advertisement

اب تارکین وطن کو بچوں سےعلیحدہ نہیں کیا جائے گا‘ امریکی صدر

واشنگٹن : امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے امیگریشن پالیسی میں تبدیلی کے حوالے سے ایگزیکٹوآرڈر پردستخط کردیے جس کے تحت اب خاندانوں کو علیحدہ نہیں کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایگزیکٹو آرڈ پردستخط کردیے، اب خاندان کو علیحدہ نہیں کیا جائے گا لیکن امریکہ میں غیرقانونی طورپرداخل ہونے والے افراد کو اب بھی گرفتار کیا جائے گا۔

ایگزیکٹو آرڈ کے مطابق غیرقانونی تارکین وطن کو اکٹھا قید میں رکھا جائے گا تاہم ایسے کیسز جہاں بچے کی فلاح خطرے میں ہو وہاں بچے کو علیحدہ کیا جائے گا۔

ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ تارکین وطن کے بچوں کو والدین سے الگ کرنے کی پالیسی 60 سال سے جاری تھی۔ انہوں نے کہا کہ یہ فیصلہ ان بچوں کی تصاویر دیکھ کرکیا جس کے والدین کو امریکہ میں غیرقانونی طورپرداخل ہونے پرحراست میں لیا گیا تھا۔

امریکی صدر نے کہا اب غیرقانونی تارکین وطن کے بچے ساتھ رہیں گے۔ مجھے خاندانوں کو جدا کرنا اچھا نہیں لگا۔

تارکین وطن کی بچوں سے علیحدگی، ٹرمپ کو شدید احتجاج کا سامنا

ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے ایگزیکٹو آرڈ پردستخط ایسے وقت پرکیے گئے جب امریکہ میں اور عالمی سطح پرغیرقانونی طور پرامریکہ میں داخل ہونے والے لوگوں کو بچوں سے علیحدہ کیا جانے پرتنقید کا نشانہ بنایا گیا۔

خیال رہے کہ گزشتہ 6 ہفتوں میں امریکی سرحد پرتقریباََ 2 ہزار مہاجر بچوں کی ان کے گھروالوں سے علیحدہ کردیا گیا۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں