ڈونلڈٹرمپ کی برطانوی پارلیمنٹ سے خطاب کی تجویز رد -
The news is by your side.

Advertisement

ڈونلڈٹرمپ کی برطانوی پارلیمنٹ سے خطاب کی تجویز رد

لندن : برطانوی حکومت نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ برطانوی پارلیمنٹ سے خطاب کی تجویز رد کردی، یہ فیصلہ دارالعوام کے اسپیکر سمیت متعدد اراکین کی مخالفت کے باعث کیا گیا ہے۔

ویسٹ منسٹر کے ذرائع کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو رواں سال دورہ برطانیہ کے موقع پر برطانوی پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں کے مشترکہ اجلاس سے خطاب کرنے کی تجویز زیر غور تھی، تاہم برطانوی دارالعوام کے اسپیکر جان بیرکاؤ سمیت متعدد اراکین کی مخالفت کے باعث یہ فیصلہ کیا گیا۔

ڈونلڈ ٹرمپ کے دورے کے دوران ان کی عوامی اجتماعات میں شرکت کم سے کم رکھنے کا بھی فیصلہ کیا گیا ہے تاکہ ممکنہ احتجاج سے بچا جاسکے۔


مزید پڑھیں : اسپیکر کا ٹرمپ کو برطانوی ایوان سے خطاب کی اجازت دینے سے انکار


یاد رہے کہ اس سے قبل اسپیکر برطانوی پارلیمنٹ نے دو ٹوک کہا تھا کہ دورہ برطانیہ میں ٹرمپ کو ایوان سے خطاب کی اجازت نہیں دینگے۔

برطانوی اراکین پارلیمنٹ سے گفتگو کرتے ہوئے اسپیکر جان برکاؤ نے کہا تھا کہ وہ تارکینِ وطن پر پابندی کے حکم نامے سے پہلے بھی ٹرمپ کے برطانوی ایوان سے خطاب کے مخالف تھے تاہم اس پابندی کے بعد اس کے شدید مخالف ہوگئے ہیں۔

خیال رہے کہ ٹرمپ کے مسلم ممالک کے خلاف بیان اوراقدامات پر صرف امریکہ ہی نہیں یورپ میں بھی شدید غم و غصہ پایا جاتا ہے اور ان پر شدید تنقید کی جارہی ہے جبکہ برطانوی عوام نے ٹرمپ کو برطانیہ آنے سے روکنے کیلئے پٹیشن پر اٹھارہ لاکھ سے زائد افراد نے دستخط کر دیئے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں