site
stats
سندھ

ڈاکٹرعاصم کیس، تفتیشی افسرپررینجرز کی جانب سے مقدمے کا امکان

کراچی : رینجرز کی جانب سےڈاکٹرعاصم کیس کے تفتیشی افسرپرمقدمے کاامکان ہے۔ ذرائع کے مطابق رینجرز کی جانب سے ڈی ایس پی الطاف حسین کے خلاف قانونی چارہ جوئی پر غور کیا جارہا ہے۔

ڈی ایس پی الطاف حسین نے جے آئی ٹی رپورٹ اور سابقہ تفتیشی افسر کی تفتیش کویکسر انداز کرکے ڈاکٹر عاصم کو بے گناہ قراردیدیا۔

اس اقدام پردہشت گردی کے قوانین کی دفعہ 27 کا اطلاق ہوتا ہے جس کے تحت تفتیشی افسرنےناقص تفتیش کرکے مجرم یا ملزم کا ساتھ دیا ہو۔

رینجرز ذرائع کے مطابق جلد ہی قانونی نکات پر جائزے کے بعد درخواست سندھ ہائی کورٹ میں دائر کی جائے گی، ڈی ایس پی الطاف نےسابق تفتیشی افسرکےنکات نظراندازکیے ملزم کاساتھ دینےپردہشتگردی کی دفعہ لگ سکتی ہے۔

ذرائع کے مطابق رینجرز کل سندھ ہائیکورٹ میں ڈی ایس پی الطاف حسین کیخلاف اپنے مجوزہ درخواست میں یہ موقف اختیار کرے گی کہ تفتیشی افسر نے اپنی ذمہ داری پوری نہیں کی ان کی تفتیش کی وجہ سے ملزم کو رعایت ملی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top