site
stats
سندھ

ڈاکٹرعاصم کیس: نیب نے الاٹ کی گئی زمینوں کا ریکارڈ پیش کردیا

کراچی : احتساب عدالت میں ڈاکٹر عاصم کرپشن کیس کی سماعت کے دوران نیب کی جانب سے عدالت میں الاٹ کی گئی زمینوں کا ریکارڈ پیش کردیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت میں ڈاکٹر عاصم کے خلاف چارسو باسٹھ ارب روپے کے کرپشن کیس کی سماعت ہوئی، دورانِ سماعت ڈاکٹر عاصم کے وکلاء نے نیب کے ریکارڈ کو جعلی قرار دے دیا۔

ڈاکٹر عاصم کے وکلاء نے عدالت میں مؤقف پیش کیا کہ دستاویزات کو قبضے میں لیا جانے والا میمو جعلی ہے، جو دستاویزات سربمہر کئے گئے ہیں وہ عدالت میں پیش نہیں کئے گئے۔

مزید پڑھیں : اگر تفتیشی افسر کو کچھ ہوگیا تو الزام مجھ پر لگا دیا جائے گا، ڈاکٹر عاصم حسین

 اس کے جواب میں نیب کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ ’’ تمام دستاویزات اصلی ہیں اور مفروضوں پر مبنی باتیں نہ کی جائیں، دورانِ سماعت گواہوں  کے بیان پر جرح ہونے پر عدالت نے اگلی سماعت پر مزید گواہوں کو طلب کرتے ہوئے کیس کی پیروی 13 جون تک ملتوی کردی۔

اس موقع پر میڈیا سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر عاصم نے شکوہ کیا کہ ’’ قانون سب کے لیے یکساں نہیں ہے، پانامہ لیکس میں نامزد لوگوں کے لیے الگ قانون اور ہمارے لیے الگ قانون ہے‘‘۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top