site
stats
سندھ

ڈاکٹرعاصم حسین کی ضمانت کا فیصلہ نیب نے چیلنج کردیا

کراچی : نیب نے ڈاکٹرعاصم کی ضمانت کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کردیا، ڈاکٹرعاصم نے کہا ہے کہ حسین نواز ایک تصویر پر ہی رو پڑے۔

تفصیلات کے مطابق قومی احتساب بیورو نے پی پی رہنما ڈاکٹرعاصم کی ضمانت کے فیصلے کو چیلنج کرتے ہوئے سپریم کورٹ سے رجوع کرلیا ہے۔

نیب نے درخواست میں مؤقف اختیار کیا ہے کہ اربوں روپے کی کرپشن میں ملوث ڈاکٹرعاصم حسین طبی بنیادوں پرضمانت پر رہائی کے حقدار نہیں تھے۔

سندھ ہائی کورٹ الزامات کی سنگینی کو مدنظر نہیں رکھ سکی لہٰذا ان کی ضمانت منسوخ کی جائے۔ نیب کی درخواست میں ڈاکٹرعاصم اوران کی اہلیہ کو فریق بنایا گیا ہے۔ درخواست میں انصاف کے تقاضوں کو مدنظر رکھتے ہوئے ضمانت منسوخ کرنے کی استدعا کی گئی ہے۔


مزید پڑھیں : ڈاکٹرعاصم کی ضمانت ، تحریری حکم نامہ جاری


دوسری جانب کراچی کی احتساب عدالت میں پیشی پر ڈاکٹرعاصم نے صحافیوں سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ حسین نواز تو ایک تصویر پر ہی رو پڑے، ہمارا کون جواب دے گا۔


ڈاکٹرعاصم کانام ای سی ایل میں شامل ہوا یانہیں؟ رپورٹ تاحال جمع نہ ہوسکی


 ان کا کہنا تھا کہ جوسلوک میرے ساتھ ہوا وہ حسین نواز کے ساتھ نہیں ہوا۔ میری جےآئی ٹی تین ماہ تک ہوئی، وزیراعظم کےصاحبزادے سےٖ صرف باہتر گھنٹے پوچھ گچھ کی گئی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top