ہاتھ پھیلانا چھوڑیں اوراپنی چیزیں بہتر بنائیں، ڈاکٹر عاصم
The news is by your side.

Advertisement

ہاتھ پھیلانا چھوڑیں اور اپنی چیزیں بہتر بنائیں، ڈاکٹر عاصم

کراچی : پیپلزپارٹی کے رہنما ڈاکٹر عاصم حسین کا کہنا ہے کہ ہاتھ پھیلانا چھوڑیں، اپنی چیزیں بہتر بنائیں ، منی بجٹ میں ٹیکس دینے والوں کو مار دیا ہے، ملک میں ٹیکس پیئرز بڑھانے چاہئیے۔

تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت کے باہر میڈیا سے بات کرتے ہوئے ڈاکٹر عاصم حسین نے کہا بجٹ کے آنے کے بعد ٹیکس دینے والوں کو مار دیا گیا ہے، بہترہوتاحکومت کھانے پینے کی مہنگی اشیا پر پابندی لگاتی، ملک میں ٹیکس پیئرز بڑھانے چاہئیے۔

ڈاکٹر عاصم کا کہنا تھا کہ پاکستان معاشی طور پر تباہ ہوچکا ہے، ہاتھ پھیلاناچھوڑیں،اپنی چیزیں بہتر بنائیں، ٹیکس کا دائرہ کار بڑھایا جائے،خود پر انحصار کریں، عمران خان آخری آپشن ہیں۔

پی پی رہنما نے کہا اللہ نے پاکستان کو بہت نواز رکھا ہے، گیس کے بہت ذخائر ہیں سمجھ نہیں آتا کیوں نہیں نکالتے۔

یاد رہے چند روز  قبل  پیپلزپارٹی کے رہنما ڈاکٹر عاصم کا پیشی پر کہناتھا کہ  ہم عمران خان کیساتھ ہیں،وہ منتخب وزیر اعظم ہیں، ہم یہ تو نہیں کہہ سکتے وہ وزیراعظم نہیں۔

ان کامزید کہنا تھا عمران خا ن کرپشن کیخلاف جو کررہے ہیں ، ہم ان کے ساتھ ہیں،کسی کو انتقامی کارروائی کا نشانہ نہیں بنانا چاہیے، مجھ پرجعلی مقدمات بنائے گئے،ان پر نظر ثا نی کرنی چاہیے۔

ڈیم کے حوالے سے ڈاکٹر عاصم نے کہا تھا کہ پانی کی قلت قومی مسئلہ بن چکا ہے، چیف جسٹس نے ڈیم بنانے کے حوالے سے بہت ہی اچھا اقدام اٹھایا ہے میں بھی ڈیم کی تعمیر میں اپنا حصہ ڈالوں گا، دیگر سیاستدانوں اور تمام لوگوں کو اس قومی ضرورت کو پورا کرنے کے لئے حصہ لینا چاہیے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں