بیرون ملک روانگی کے لیے ڈاکٹر عاصم کو وزارت داخلہ کا این او سی -
The news is by your side.

Advertisement

بیرون ملک روانگی کے لیے ڈاکٹر عاصم کو وزارت داخلہ کا این او سی

کراچی: سندھ ہائیکورٹ نے سابق وزیر پیٹرولیم ڈاکٹر عاصم حسین کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ سے خارج کرنے سے متعلق وفاقی حکومت سے تفصیلی جواب طلب کرلیا۔ وزارت داخلہ سندھ نے ان کے بیرون ملک سفر کے لیے نو اوبجیکشن لیٹر بھی جاری کردیا۔

تفصیلات کے مطابق ڈاکٹر عاصم کے بیرون ملک علاج کا معاملہ تاحال عدالت میں زیر سماعت ہے۔

ڈاکٹر عاصم کا نام ای سی ایل میں شامل کیے جانے سے متعلق وفاقی حکومت نے جواب جمع کروایا کہ ڈاکٹر عاصم کے خلاف اربوں روپے کرپشن کا مرکزی ریفرنس زیر التوا ہے۔ عدالتی احکامات کی روشنی میں ای سی ایل میں نام شامل کیا گیا تھا۔

دوسری جانب سندھ حکومت نے ڈاکٹر عاصم کے بیرون ملک سفر پر نو اوبجیکشن لیٹر عدالت میں جمع کروا دیا۔

مزید پڑھیں: ڈاکٹر عاصم لندن روانگی کے لیے تیار

ڈاکٹر عاصم کے وکیل لطیف کھوسہ کا دلائل میں کہنا تھا کہ ان کے موکل کا علاج پاکستان میں ممکن ہی نہیں۔ 9 رکنی میڈیکل بورڈ نے ڈاکٹر عاصم کا علاج بیرون ملک تجویز کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ڈاکٹر عاصم کو بیرون ملک نہ جانے دیا گیا تو ان کی جان کو خطرہ ہوسکتا ہے۔

عدالت نے ایڈیشنل اٹارنی جنرل اور نیب پراسیکیوٹر سے 15 مئی کو تفصیلی دلائل طلب کرلیے۔

یاد رہے کہ 3 مئی کو ڈاکٹر عاصم نے لندن روانگی کے لیے بک کروایا گیا ٹکٹ عدالت میں جمع کروایا تھا اور استدعا کی تھی کہ انہیں علاج کے لیے اہلیہ کے ساتھ لندن روانگی کی اجازت دی جائے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں