The news is by your side.

Advertisement

ڈاکٹر عاصم دوبارہ ہائر ایجوکیشن کمیشن کے سربراہ مقرر

کراچی : ڈاکٹر عاصم کو دوبارہ ہائر ایجوکیشن کمیشن کے سربراہ مقرر کردیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما ڈاکٹر عاصم حسین کو ایک بار پھر سندھ ہائر ایجوکیشن کمیشن (ایچ ای سی) کا سربراہ مقرر کردیا۔ وزیراعلیٰ نے ڈاکٹر عاصم کو ہائرایجوکیشن کمیشن کا سربراہ بنایا۔

ہائرایجوکیشن کمیشن کے سربراہ کی تعیناتی کا باقاعدہ نوٹیفیکشن بھی جاری کیا گیا ہے۔

یاد رہے کہ 29 نومبر 2017 میں سپریم کورٹ کے حکم پر ڈاکٹر عاصم کا نام ای سی ایل سے نکال دیا گیا تھا۔

اس سے قبل 29 مارچ کو سندھ ہائی کورٹ نے طبی بنیادوں پر ڈاکٹرعاصم حسین کے خلاف 479 ارب روپے کی کرپشن کے 2 مقدمات میں 25،25 لاکھ روپے کے 2 ضمانتی مچلکوں کے عوض ضمانت منظور کی تھی۔

جس کے بعد انہیں 19 ماہ بعد 31 مارچ کو رہا کردیا گیا تھا۔

واضح رہے کہ اگست 2015ء میں پیپلز پارٹی کے رہنماء ڈاکٹر عاصم حسین کو 462 ارب روپے کرپشن اور دہشتگردوں کے علاج و معالجے مقدمے میں اس وقت گرفتار کیا گیا تھا، جب وہ صوبائی ہائیر ایجوکیشن کمیشن کے ایک اجلاس کی صدارت کررہے تھے۔

بعد ازاں نیب نے کرپشن کی تحقیقات بھی شروع کردی تھیں۔

خیال رہے  ڈاکٹر عاصم پر 462 ارب روپے کی کرپشن کا بھی الزام ہے، جس میں ان کے خلاف نیب نے ریفرنس دائر کر رکھا ہے جبکہ جیل میں ہونے کے باوجود پیپلز پارٹی ڈاکٹر عاصم کو کراچی کا صدر بھی مقرر کر چکی ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں