site
stats
پاکستان

ڈاکٹر عاصم کو بیرون ملک بھیجنے کی تجویز

کراچی: پیپلز پارٹی کراچی کے اسیر صدر ڈاکٹر عاصم کو ان کے میڈیکل بورڈ نے علاج کے لیے بیرون ملک بھیجنے کی تجویز دے دی۔

ڈاکٹر عاصم کے میڈیکل بورڈ کا کہنا ہے کہ ڈاکٹر عاصم کا علاج پاکستان میں ممکن نہیں۔ ان کی ہائیڈرو تھراپی عارضی ہے۔ ڈاکٹر عاصم کی کمر کی فوری سرجری کروانا ہوگی۔

میڈیکل بورڈ کے مطابق ان کا علاج امریکا، جاپان یا یورپ میں ہی ممکن ہے۔

اس سے قبل 462 ارب روپے کرپشن ریفرنس کی سماعت شروع ہوئی تو ڈاکٹر عاصم کو پیش نہیں کیا گیا۔ جج کے استفسار پر انہیں ساڑھے دس بجے بتایا گیا کہ ڈاکٹر عاصم آ رہے ہیں۔ عدالت نے انہیں فوری پیش کرنے کا حکم دیا۔

پیپلز پارٹی کے سابق وفاقی وزیر ڈاکٹر عاصم کو اس سے قبل بھی سینے میں درد کی شکایت پر قومی ادارہ برائے امراض قلب میں داخل کیا گیا تھا جہاں ای سی جی کے درست نہ آنے پر انہیں انتہائی نگہداشت کے وارڈ میں منتقل کیا گیا تھا۔

ڈاکٹر عاصم حسین کمر درد، بلند فشار خون اور ذیابیطس کے امراض میں مبتلا ہیں جن کے علاج کے لیے عدالتی حکم کے تحت انہیں جناح اسپتال میں داخل کیا گیا تھا جہاں وہ 2 ماہ سے زائد زیر علاج رہے۔

واضح رہے کہ ڈاکٹر عاصم حسین کو گزشتہ برس اگست میں اس وقت گرفتار کیا گیا تھا جب وہ ہائر ایجوکیشن کمیشن کے دفتر میں ایک اہم اجلاس کی صدارت کر رہے تھے۔ انہیں دہشت گردوں کو علاج مہیا کرنے کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا۔

گزشتہ ماہ پیپلز پارٹی نے انہیں پارٹی کے کراچی ڈویژن کا سربراہ بھی مقرر کردیا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top