The news is by your side.

Advertisement

کرتارپور راہداری پر مذاکرات کا اگلا دور 2 اپریل کو پاکستان میں ہوگا ، ڈاکٹر فیصل

لاہور : کرتارپورراہداری سےمتعلق پاک بھارت اجلاس پر مشترکہ اعلامیہ جاری کردیا گیا ، ڈاکٹرفیصل کا کہنا ہے کہ کرتار پور راہداری پر اگلا اجلاس انیس مارچ کو زیرو پوائنٹ پر ہوگا اور دو اپریل کو اجلاس پاکستان میں ہوگا۔

تفصیلات کے مطابق کرتارپورراہداری سےمتعلق پاک بھارت اجلاس پر مشترکہ اعلامیہ جاری کردیا، کرتارپور راہداری پر اٹاری میں مذاکرات کے بعد پاکستانی وفد واپس وطن پہنچ گیا۔

پاکستانی وفدکےسربراہ ڈاکٹرفیصل کی میڈیابریفنگ دیتے ہوئے کہ مشترکہ اعلامیہ جاری ہونا ایک بڑی کامیابی ہے، بھارتی وفد کی قیادت جوائنٹ سیکریٹری داخلہ نے کی، دونوں ملکوں میں تکنیکی امور پر ماہرین کا بھی اجلاس ہوا، فریقین میں راہداری سے متعلق تکنیکی نکات پر بات ہوئی۔

ترجمان دفترخارجہ کا کہنا تھا پاک بھارت وفود میں دوسری ملاقات 2 اپریل کو پاکستان میں ہوگی، بہت اچھی میٹنگ ہوئی، ہم آگے بڑھ چکے ہیں، 19 مارچ کو کرتارپور راہداری پر زیرو پوائنٹ پر ایک اوراجلاس ہوگا، 2 اپریل کو اجلاس پاکستان میں ہوگا، جس میں میڈیا کو مدعو کریں گے۔

ڈاکٹرفیصل کا کہنا تھا کہ کوئی ویزہ شرائط نہیں، کرتاپورراہداری ویزافری ہے ، کچھ تفصیلات سےابھی آگاہ نہیں کرسکتا، تکنیکی نکات پرایک اوراجلاس آئندہ منگل کوہوگا۔

مزید پڑھیں : کرتارپورراہداری : پاک بھارت مذاکرات ختم

خیال رہے پاکستان اوربھارت کےدرمیان کرتارپور راہداری کھولنے کےمنصوبے کوعملی جامہ پہنانے کیلئے مذاکرات بھارتی شہر اٹاری میں ہوئے، جس میں  مقدس مقام کرتارپورصاحب تک بھارتی یاتریوں کی آمد ورفت کھولنے کے سلسلے میں تفصیلات پربات چیت کی گئی۔

روانگی سے قبل دفتر خارجہ کے ترجمان ڈاکٹر فیصل کا کہنا تھا کرتارپورراہداری کھولنےکاایجنڈا لےکر جارہے ہیں،امید ہےبھارت بھی مثبت قدم بڑھائےگا،پاک بھارت کشیدگی میں کمی خطےکےامن کےلیےضروری ہے،راہداری پراجلاس وزیراعظم کےوژن کاعکاس ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں