The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب: سخت احتیاطی تدابیر کے تحت خواتین کا ڈرائیونگ اسکول کھول دیا گیا

ریاض: سعودی عرب کے شہر دمام میں سخت احتیاطی تدابیر کو اپناتے ہوئے خواتین کا ڈرائیونگ اسکول کھول دیا گیا، ڈرائیونگ گاڑیوں میں انسٹرکٹر اور شاگرد کے درمیان خصوصی پلاسٹک شیٹ لگائی گئی ہے۔

سعودی ویب سائٹ کے مطابق سعودی شہر دمام میں الامام عبد الرحمٰن بن فیصل یونیورسٹی کے خواتین ڈرائیونگ اسکول میں مقررہ پروٹوکول کے تحت ڈرائیونگ کلاسز بحال کردی گئیں۔

انتظامیہ کا کہنا ہے کہ اسکول میں مقررہ ایس و پیز کی مکمل طور پر پابندی کی جا رہی ہے۔

یونیورسٹی کے نگران اور ڈرائیونگ سکول کمیٹی کے چیئرمین ڈاکٹر صالح الراشد کا کہنا ہے کہ اسکول میں ہر 1 گھنٹے بعد مکمل طور پر جراثیم کش ادویات کا اسپرے کر کے صفائی کی جاتی ہے جبکہ عمارت میں جگہ جگہ سینی ٹائزر کی فراہمی کو یقینی بنایا گیا ہے۔

چیئرمین کا کہنا ہے کہ ڈرائیونگ گاڑیوں میں انسٹرکٹر اور شاگرد کے درمیان خصوصی پلاسٹک شیٹ لگائی گئی ہے، علاوہ ازیں انسٹرکٹر کو خصوصی فیس شیلڈ بھی مہیا کی گئی ہے۔

ڈرائیونگ کلاسز کے لیے آنے والی خواتین کو بھی ماسک اور دستانے فراہم کیے جاتے ہیں، استعمال ہونے والی گاڑی کو ہر بار استعمال سے قبل جراثیم کش ادویات سے صاف کیا جاتا ہے۔

اسکول میں سماجی فاصلے کے اصول کے تحت دفتر میں کام کرنے والی خواتین کو اس امر کا بھی پابند کیا گیا ہے کہ وہ اپنی ڈیسک یا دفتر کے علاوہ کہیں اور نہیں جائیں گی، ادارے میں ہوٹلوں سے کھانا لانے پر بھی پابندی عائد کردی گئی ہے۔

علاوہ ازیں ڈرائیونگ اسکول کے ٹوائلٹس کو ہر 1 گھنٹے بعد جراثیم کش ادویات سے صاف کیا جاتا ہے جبکہ راہداریوں میں بھی سینی ٹائزنگ کے عمل کو یقینی بنایا گیا ہے۔

انتظامیہ کا مزید کہنا تھا کہ اسکول میں صرف ان ہی کو آنے کی اجازت ہوگی جنہوں نے پیشگی وقت لیا ہوگا یا جن کی کلاس ہو، ان کے علاوہ اسکول سے رجوع کرنے والوں کو منع کردیا گیا ہے، جسے معلومات درکار ہوں وہ آن لائن یا ٹیلی فون پر معلومات حاصل کر سکتے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں