site
stats
بزنس

معاشی ترقی، برآمدات اور سرمایہ کاری سے متعلق اہداف حاصل نہ ہو پائے

اسلام آباد : اقتصادی سروے کے اعداد وشمار بتاتے ہیں کہ معاشی ترقی، برآمدات اور سرمایہ کاری سمیت موجودہ بجٹ میں مقرر کیے گئے اہم اہداف حاصل نہ ہو پائے۔

اقتصادی سروے 2016-17 کے مطابق صنعتوں کی ترقی کے لیے ہدف 7.7 مقرر کیا گیا تھا جوکہ 5.2 رہی اسی طرح معاشی شرح نمو 5.28 فیصد رہی اور برآمدات کا ہدف 3 ارب ڈالر کم رہا۔

اقتصادی سروے میں دیکھا گیا کہ ٹیکس محصولات کاہدف 3621ارب تھا جب کہ موجدہ صورت حال بتاتی ہے کہ وصولیاں 3500 ارب تک متوقع ہے اسی طرح مہنگائی کی شرح 4.1 رہی جب کہ سرمایہ کاری 17.7 فیصد کے ہدف کے مقابلے میں صرف 15.8 فیصد رہی۔

بجٹ میں زراعت کی ترقی کا ہدف 3.5 فیصد رکھا گیا تھا جسے حاصل کرلیا گیا اور اس شعبے میں کارکردگی 3.46 فیصد رہی اسی طرح مہنگائی کا 6 فیصد کا ہدف بھی حاصل کرلیا گیا۔

دوسری جانب سرکاری اعداد و شمار کے مطابق 24.8 ارب ڈالر ہدف کے مقابلے میں برآمدات 21.7 ارب ڈالر رہیں یعنی برآمدات ہدف سے3ارب ڈالرکم رہیں تاہم درآمدات 45.2 ارب ڈالر کے ہدف سے زیادہ یعنی 45.7 ارب ڈالررہیں۔

اسی طرح سروسزسیکٹرکا 5.5 فیصد ہدف پورا کر لیا اور اس شعبے میں بھی کارکردگی 5.98 فیصدرہی جو کہ نہایت خوش آئند ہے۔

حکومت کی جانب سے دعوی کیا گیا ہے کہ موجودہ صورت حال درست سمت کی جانب نشاندہی کررہے ہیں اورسی پیک سمیت دیگر پروجیکٹس کی تکمیل سے سرمایہ داروں کا اعتبار بڑھا ہے اوروہ پاکستان میں سرمایہ داری میں دلچسپی ظاہرکر رہے ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top