The news is by your side.

Advertisement

قومی اقتصادی سروے آج پیش کیا جائے گا

اسلام آباد : قومی اقتصادی سروے آج جاری کیا جا رہا ہے۔ رواں مالی سال حکومت اہم معاشی اشاریوں کا ہدف حاصل نہ کرسکی، وزیر خزانہ اسحاق ڈار آج قومی اقتصادی سروے آج جاری کریں گے جبکہ آئندہ مالی سال کا بجٹ کل پیش کیا جائے گا۔

اقتصادی سروے کے اہم نکات کے مطابق چیلنجز کے باوجود پاکستان کی معیشت رواں مالی سال استحکام کے بعد ترقی کی جانب گامزن ہو گئی ہے، تاہم اہم معاشی اہداف حاصل نہ کئے جاسکے۔

رواں سال معاشی شرح نمو کا چار اعشاریہ سات فیصد رہی۔ جس کا ہدف ساڑھے پانچ فیصد رکھا گیا تھا۔ زراعت کی شرح نمو منفی صفر اعشایہ دو فیصد رہی مینوفیکچرنگ کے شعبے کا ہدف بھی حاصل نہ ہو سکا۔ مینوفیکچرنگ کی شرح نمو پنچ فیصد رہی خدمات کا شعبہ اپنا مقررہ ہدف حاصل کرنے میں کامیاب رہا۔

خدمات کے شعبے کی ترقی پانچ اعشاریہ سات فیصد رہی، بڑی صنعتیں بھی اپنا ہدف حاصل نہ کر سکی، ایل ایس ایم گروتھ چار اعشاریہ چھ فیصد رہی، صنعتی پیداوار کی ترقی چار اعشاریہ آٹھ فیصد رہی جو کہ ہدف سے صفر اعشاریہ چار فیصد زائد ہے۔

ہول سیل اور ریٹیل سیکٹر بھی اپنا مقررہ ہدف حاصل نہ کر سکے، چھوٹی صنعتوں کی ترقی آٹھ فیصد رہی، لائیو اسٹاک سیکٹر کی ترقی کی شرح تین اعشاریہ تین فیصد رہی، سرمایہ کاری کی ترقی کی شرح پندرہ اعشاریہ دو فیصد رہی اور یہ بھی ہدف سے کم ہے قومی بچت بھی اپنا مقررہ ہدف حاصل کرنے میں ناکام رہی، قومی بچت کی ترقی کی شرح چودہ اعشاریہ چھ فیصد رہی۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں