The news is by your side.

Advertisement

عائشہ گلالئی کیخلاف عمران خان کا ریفرنس بدنیتی،عداوت پر مبنی قرار

اسلام آباد : الیکشن کمیشن نے پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کی جانب سے عائشہ گلالئی کے خلاف دائر ریفرنس کو خارج کرنے کا تفصیلی فیصلہ جاری کرتے ہوئے ریفرنس کو بدنیتی اور عداوت پر مبنی قرار دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق الیکشن کمیشن نے عائشہ گلالئی کیخلاف ریفرنس خارج کرنے کا تفصیلی فیصلہ جاری کردیا ، فیصلے میں کہا گیا ہے کہ پی ٹی آئی نے ریفرنس بھجوانے سے قبل گلالئی کو سننے کا موقع نہیں دیا، گلالئی نے23اگست کوجواب بھجوایاجسےریفرنس میں شامل نہیں کیاگیا، کسی بھی رکن کوریفرنس سےقبل سننے کاپورا موقع فراہم کرنا لازمی ہے۔

الیکشن کمیشن نے تحریری فیصلے میں کہا کہ عائشہ گلالئی نےتحریک انصاف نہیں چھوڑی کیونکہ پارٹی چھوڑنے کے لیے تحریری استعفیٰ لازم ہے۔

عائشہ گلالئی کے خلاف ریفرنس کو بدنیتی پر مبنی قرار دیتے ہوئے الیکشن کمیشن نے کہا ہے کہ غیر حاضری پر دیگر ارکان کے خلاف کارروائی نہ کرنا بدنیتی ظاہر کرتی ہے۔


مزید پڑھیں : عائشہ گلالئی کی نااہلی کے لیے عمران خان کی درخواست مسترد


یاد رہے کہ الیکشن کمیشن آف پاکستان نے عائشہ گلالئی کو نا اہل کرنے سے متعلق چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان کی درخواست مسترد کردی تھی

ممبربلوچستان اورپنجاب نےعائشہ گلالئی کونااہل کرنے کا اختلافی نوٹ دیا تھا جبکہ الیکشن کمیشن نےریفرنس2-3کی اکثریت سےخارج کردیا تھا ، چیف الیکشن کمشنر،ممبرسندھ، کے پی نے ریفرنس خارج کرنے کے حق میں فیصلہ دیا تھا۔


مزید پڑھیں : تحریک انصاف میں خواتین کی عزت محفوظ نہیں، عائشہ گلالئی


خیال رہے کہ رواں برس یکم اگست کو عائشہ گلالئی نے پریس کانفرنس کے دوران پاکستان تحریک انصاف چھوڑنے کا اعلان کرتے ہوئے عمران خان پرسنگین الزمات عائد کیے تھے۔

واضح رہے کہ رواں سال 28 اگست کو پاکستان تحریک انصاف نے عائشہ گلالئی کی پارٹی رکنیت منسوخ کردی تھی جبکہ انہیں ڈی سیٹ کرانے کے لیے الیکشن کمیشن سے رجوع کیا تھا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں