عمران خان حلف کب اٹھائیں گے؟ اپوزیشن کا کیا منصوبہ ہے؟ -
The news is by your side.

Advertisement

عمران خان حلف کب اٹھائیں گے؟ اپوزیشن کا کیا منصوبہ ہے؟

اسلام آباد: پاکستان تحریکِ انصاف کے چیئرمین عمران خان وزارتِ عظمیٰ کا حلف کب اٹھائیں گے، کیا عمران خان 11اگست کو حلف اٹھا سکیں گے، اس حوالے سے الیکشن کمیشن کا کہنا ہے ایسا ممکن نہیں ہے۔

تفصیلات کے مطابق الیکشن کمیشن نے کہا ہے کہ عمران خان 11 اگست تک وزارتِ عظمیٰ کا حلف نہیں اٹھا سکتے، 11 اگست کو حلف برداری کی تقریب تکنیکی طور پر ممکن نہیں ہے۔

الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ انتخابی اخراجات جمع کرانے کی مہلت 4 اگست کو ختم ہوگی، جب کہ کام یاب امیدواروں کا نوٹیفکیشن جاری کرنے میں 2 دن لگیں گے۔

ذرائع نے کہا ہے کہ نوٹیفکیشن کے اجرا کے بعد بھی آزاد ارکان کو کسی پارٹی میں شمولیت کے لیے 3 دن دیے جائیں گے، جن میں وہ اپنے لیے پارٹی کا فیصلہ کریں گے۔

ذرائع الیکشن کمیشن نے یہ بھی کہا ہے کہ الیکشن کمیشن 2 دن اقلیتوں اور خواتین کی مخصوص نشستوں کے فیصلے کے لیے بھی دے گا، یہ تمام مراحل 11 اگست کو مکمل ہوں گے۔

پاکستان تحریک انصاف وفاق میں حکومت بنانے کی مضبوط پوزیشن میں

الیکشن کمیشن نے واضح کیا ہے کہ نو منتخب اسمبلی اراکین 12 اگست سے پہلے حلف نہیں اٹھا سکتے، اس صورتِ حال میں عمران خان کا 14 اگست کو بہ طور وزیرِ اعظم حلف اٹھانے کا امکان ہے۔

حلف برداری کے موقع پر اپوزیشن کا منصوبہ


دوسری طرف عمران خان کے وزارتِ عظمیٰ کا حلف اٹھانے کی تقریب کے موقع پر اپوزیشن نے بھی اپنا منصوبہ ترتیب دے دیا ہے، اپوزیشن کے لائحہ عمل کے مطابق تقریبِ حلف برداری کے موقع پر بھرپور احتجاج کا فیصلہ کیا جائے گا۔

ذرائع نے کہا ہے کہ اپوزیشن جماعتیں حلف برداری والے دن اسلام آباد میں احتجاجی جلسہ منعقد کریں گی، اپوزیشن نے الیکشن کمیشن کے باہر بھی احتجاج کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں