The news is by your side.

Advertisement

دشمن ہمیں روایتی جنگ کے ذریعے شکست دینے کی اہلیت نہیں رکھتا، سابق عسکری ماہرین

اسلام آباد : سابق فوجیوں کی تنظیم ویٹرنز آف پاکستان نے کہا ہے کہ دشمن ہمیں روایتی جنگ کے زریعے شکست دینے کی اہلیت نہیں رکھتا، پاکستان کو اندر سے کمزور کیا جا رہا ہے مگر دشمن کی سازشوں کا منہ توڑ جواب دینے کیلئے قوم اور فوج متحد ہے۔

تفصیلات کے مطابق سابق فوجیوں کی تنظیم ویٹرنز آف پاکستان (وی او پی) کے صدر جنرل علی قلی خان کی صدارت میں منعقدہ ایک اجلاس کے بعد جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا کہ وہ بری افواج کے سربراہ کے فیصلوں کی مکمل تائید و حمایت کرتے ہیں، پاکستانی معیشت، سیاست اورفاٹا کی صورتحال کے متعلق ان کی رائے حقائق پر مبنی ہے جبکہ دہشت گردی کو جڑ سے اکھاڑپھینکنے کا عزم قابل تعریف ہے ۔

بیان میں کہا گیا کہ دشمن ہمیں روایتی جنگ کے زریعے شکست دینے کی اہلیت نہیں رکھتا ، پاکستان کو اندر سے کمزور کیا جا رہا ہے مگر دشمن کی سازشوں کا منہ توڑ جواب دینے کیلئے قوم اور فوج متحد ہے۔

ریٹائرڈ جنرل نے کہاکہ فاٹا کی تعمیر نو اور آبادکاری میں غیر ضروری تاخیر ہو رہی ہے ، جس سے بے چینی اور دیگر مسائل جنم لے رہے ہیں ، اگر قبائلی عوام کے مسائل پر توجہ نہ دی گئی تو جو کچھ اس طویل اور مہنگی جنگ میں حاصل کیا گیا ہے ضائع ہونے کا اندیشہ ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ فاٹا کے انضمام میں مزید تاخیر نہ کی جائے اور قبائلیوں کو بلاتاخیروہ تمام حقوق دئیے جائیں ، جو ملک کے دیگر علاقوں کے رہنے والوں کو ملے ہوئے ہیں۔

سابق عسکری ماہرین نے امریکی ڈیفنس اتاشی کے ہاتھوں بے گناہ شخص کی ہلاکت کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ امریکی اہلکار کے خلاف جو کارروائی کرنی ہو وہ متعلقہ قوانین کے تحت پاکستان میں ہی کی جائے۔

انھوں نے کہا کہ بھارت کشمیر میں انسانی حقوق کی کھلی پامالی کر رہا ہے ، جسے بڑی طاقتیں مسلسل نظر انداز کر رہی ہیں، جس سے ہندوستان کی حوصلہ افزائی ہو رہی ہے، بھارت پاکستان کی امن کی خواہش کو اسکی کمزوری سمجھنے کی غلطی نہ کرے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں