The news is by your side.

Advertisement

پشاور کے نوجوان کا شان دار کارنامہ، بجلی سے چلنے والی موٹر سائیکل بنالی

پشاور: خیبر پختونخوا میں پھولوں کے شہر سے تعلق رکھنے والے نوجوان انجینئر شہریار خان نے موٹر سائیکل کو بجلی سے چلا کر شان دار کارنامہ انجام دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق اے آر وائی نیوز کے نمائندے عثمان علی نے بتایا کہ پشاور کے نوجوان انجینئر شہریار خان نے شان دار کارنامہ انجام دیا، شہریار نے چارج ہونے والی موٹر سائیکل بنا لی۔

حکومت تعاون کرے تو موٹر کار کو بھی بجلی سے چلا سکتا ہوں: شہریار خان

پشاور کے باہمت نوجوان انجینئر شہریار خان نے بجلی سے چلنے والی موٹر سائیکل کا کام یاب تجربہ کیا، اس موٹر سائیکل کو تین گھنٹے چارج کرنے پر 102 کلو میٹر تک بہ آسانی سفر کیا جاسکتا ہے۔

بائیک بنانے کا مقصد ماحول کو آلودگی سے بچانا ہے، انجینئر شہر یار خان نے بتایا کہ یہ موٹر بائیک تین گھنٹے میں مکمل چارج ہو کر 102 کلو میٹر سفر طے کرتی ہے۔

موٹر سائیکل چارجنگ کے دوران بجلی کا صرف ایک یونٹ خرچ کرتی ہے جس کی قیمت صرف پندرہ روپے ہے، ایک یونٹ بجلی کے خرچ پر ایک سو دو کلو میٹر تک چلنے والی بائیک 250 کلو گرام تک وزن لے جانے کی صلاحیت رکھتی ہے۔


یہ بھی پڑھیں:  ہائیڈروجن گیس سے چلنے والی ماحول دوست ٹرین کا افتتاح


انجینئر شہریار نے بتایا کہ وہ پشاور شہر کو پھر سے پھولوں کا شہر بنانا چاہتے ہیں جس کے لیے ضروری ہے کہ فضائی آلودگی کا خاتمہ ہو۔

نوجوان شہر یار نے اب نیا عزم کر لیا ہے، وہ چاہتے ہیں کہ الیکٹرک رکشہ بنائیں، ان کا کہنا ہے کہ اگر حکومت تعاون کرے تو وہ موٹر کار کو بھی بجلی سے چلانے کے قابل بنا سکتے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں