site
stats
بزنس

انجینئرنگ ڈیویلپمنٹ بورڈ بند ہونے سے سرمایہ کاری متاثر ہوگی، مینو فیکچررز

کراچی: پاکستان ایسوسی ایشن آف آٹو پارٹس اینڈ مینو فیکچررز نے انجینئرنگ ڈیویلپمنٹ بورڈ کی متوقع بندش پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ای ڈی بی کے بند ہونے سے ملک میں آٹو سیکٹر میں سرمایہ کاری کو نقصان پہنچے گا۔

یہ بات ایسوسی ایشن کے چیئرمین مشہود علی خاں نے کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہی۔

ان کا کہنا تھا کہ قائمہ کمیٹی برائے توانائی کے اجلاس میں ای ڈی بی کی جانب سے سی پیک توانائی منصوبوں میں تاخیر اور کرپشن پر تنقید کی گئی تھی جس کے بعد وزیر اعظم نواز شریف نے ادارے کی تحلیل کے احکامات جاری کر دیئے ہیں، اس بورڈ کے بند ہونے سے سرمایہ کاری متاثر ہوگی، فیکٹریاں بند ہونے سے بے روزگاری میں اضافہ ہو گا، امید ہے کہ پانامہ کیس اور جے آئی ٹی کے باوجود وزیراعظم ایسوسی ایشن کو ملاقات کاوقت دیں گے ۔

انہوں نے کہا کہ ای ڈی بی کی بدولت ملک میں مقامی سطح پر پرزہ جات تیار کرنے کی صنعت کو فروغ ملا اور ملک میں 70 فیصد کاروں کے پرزہ جات بنائے جا رہے ہیں،

ان کا کہنا تھا کہ وفاقی وزارت صنعت وپیداوار کو متعدد خطوط کے ذریعے صنعت کو درپیش مسائل سے آگاہ کیا لیکن وزارت صنعت کو آٹو کی صنعت کے مسائل کرنے میں کوئی دلچسپی نظر نہیں آتی۔

ایسوسی ایشن کے سابق چئیرمین عامراللہ والا کا کہنا تھا کہ انجینئرنگ ڈیویلپمنٹ بورڈ نے آٹو پالیسی میں اہم کردار ادا کیا ہے، حکومت نے چار ماہ سے بورڈ کا کوئی مستقل سی ای او تعینات نہیں کیا ادارہ خیراتی ادارے کی طرح کام کر رہا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ گاڑیاں بنانے والی تین غیرملکی کمپنیوں نے ملک میں سرمایہ کاری میں دلچسپی کااظہار کیا ہے،ای ڈی بی کی متوقع بندش سے سرمایہ کاری متاثر ہو سکتی ہے، وزیراعظم سے اپیل کرتے ہیں کہ ای ڈی بی کے مستقبل کے حوالے سے مثبت فیصلہ کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top