سعودی صحافی جمال خاشقجی کے معاملے کو جلد از جلد حل کرنا ہوگا، ترک صدر اردوان erdogan
The news is by your side.

Advertisement

سعودی صحافی جمال خاشقجی کے معاملے کو جلد از جلد حل کرنا ہوگا، ترک صدر اردوان

استنبول: ترک صدر رجب طیب اردوان نے کہا ہے کہ ہمیں سعودی صحافی جمال خاشقجی کے معاملے کو جلد از جلد حل کرنا ہے، سعودی حکام کو ثبوت دینا ہوگا جمال خاشقجی سعودی قونصل خانے سے چلا گیا تھا۔

تفصیلات کے مطابق دورہ ہنگری کے دوران ترک صدر طیب اردوان نے سعودی صحافی کے معاملے پر گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ جمال خاشقجی کے معاملے کو جلداز جلد حل کرنا ہوگا، سعودی حکام ثبوت فراہم کریں کہ جمال خاشقجی سعودی قونصل خانے سے چلا گیا تھا۔

ترک میڈیا کے مطابق سعودی عرب کی تحقیقاتی ٹیم تفتیش کے لیے استنبول پہنچ گئی ہے، عرب میڈیا کا کہنا ہے کہ سعودی صحافی 2 اکتوبر کو سعودی قونصل خانہ جانے کے بعد لاپتہ ہوئے تھے۔

دوسری جانب استنبول میں سعودی قونصل خانے کے باہر عرب اور ترک صحافیوں نے مظاہرہ کیا ہے،صحافتی تنظیموں نے قتل کی آزادانہ ذرائع سے تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے، مظاہرین نے سعودی صحافی کی تصاویر اور پلے کارڈز اٹھائے ہوئے تھے، مظاہرے میں سول سوسائٹی کے نمائندگان اور سیاسی شخصیات سریک تھیں۔

واضح رہے کہ لبنان میں تعینات سعودی عرب کے قائم مقام سفیر ولید بخاری نے واشنگٹن پوسٹ سے منسلک سعودی صحافی جمال خاشقجی کی گمشدگی سے متعلق کہا تھا کہ جمال خاشقجی کا ترکی میں لاپتہ ہونا ریاست کے خلاف غیرملکیوں کی منظم سازش ہے۔

مزید پڑھیں: ترک پولیس نے گمشدہ سعودی صحافی کے مبینہ قتل ہونے کا خدشہ ظاہر کردیا

خیال رہے کہ غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ ترک پولیس نے سعودی صحافی کی گمشدگی کے حوالے سے کی جانے والی ابتدائی تحقیقات میں شبہ ظاہر کیا ہے کہ جمال خاشقجی مبینہ طور پر قتل ہوچکے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں