The news is by your side.

Advertisement

ایتھوپین طیارہ حادثہ، ہلاک برطانوی خاتون کو والد کا خراج تحسین

لندن : ایتھوپین ایئرلائن طیارہ حادثے میں ہلاک ہونے والی برطانوی خاتون کے والد کا کہنا ہے کہ ’یہ حادثہ ہمارے لیے انتہائی خوفناک تھا، جوانا کی موت پر اب بھی صدمہ برقرار ہے‘۔

تفصیلات کے مطابق ایتھوپین ایئر لائن کا طیارہ بوئنگ 737 دارالحکومت سے کینیا جاتے ہوئے گر کر تباہ ہوگیا تھا، جس کے نتیجے میں 150 مسافروں کی ہلاکت ہوئی۔

برطانوی خاتون کے والد کا کہنا تھا کہ 26 سالہ جوانا کی کامیاباں میرے لیے فخر کا باعث ہیں لیکن اس کی موت بہت درد ناک تھی۔

متاثرہ خاتون کے والد کا کہنا تھا کہ جوانا حقیقت میں وہ خاتون تھی جس کے بارے میں کھبی کسی سے بُرا نہں سنا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ 15 برس جانوروں کی ویلفیئر کےلیے کام کرنے والی خاتون کو خراج تحسین پیش کرنا چاہیے۔ والد کا کہنا تھا کہ مجھے اپنی بیٹی کی کامیابیوں پر فخر ہے۔

غیر ملکی میڈیا کا کہنا ہے کہ جوانا درد رکھنے والی خاتون تھیں جنہوں نے بچپن میں سڑک پر ڈورتے ہوئے بڈگرز کے چھوٹے بچے کو بچایا تھا۔

برطانوی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ ایتھوپین طیارہ حادثے میں سات برطانوی شہریوں کی ہلاکت ہوئی ہے۔

غیر ملکی میڈیا کا کہنا ہے کہ ایتھوپین ایئر لائن کے طیارے میں 150 مسافروں کی ہلاکت کی تصدیق ہوگئی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ امریکا نے چار رکنی تحقیقاتی ٹیم تشکیل دینے کا فیصلہ کیا ہے جو مقامی اداروں کے ساتھ مل کر ایتھوپیا طیارے کے حادثے کی تحقیقات کرے گی۔

مزید پڑھیں : ایتھوپیا میں طیارہ حادثہ، امریکی ٹیم تحقیقات کرے گی

ایتھوپیا کے دارالحکومت اددیس آبابا کے ہوائی اڈے سے اڑان بھرنے والا ایتھوپین ایئر لائن کا مسافر بردار طیارہ نامعلوم وجوہات کے باعث ہوائی اڈے سے اڑان بھرنے کے کچھ دیر بعد اچانک ایتھوپین ٹاؤن بِس ہوفتو میں گر کر تباہ ہوگیا۔

امریکی تحقیقاتی ٹیم جلد افریقی ملک ایتھوپیا جائے گی، اور حادثے کا باریک بینی سے مشاہدہ کرے گی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں