The news is by your side.

Advertisement

یورپ ایران کے الٹی میٹم کو خاطر میں نہیں لائے گا: فرانس

پیرس: فرانس نے دوٹوک موقف اختیار کرتے ہوئے کہا ہے کہ یورپ ایران کے الٹی میٹم کو خاطر میں نہیں لائے گا۔

تفصیلات کے مطابق فرانسیسی وزیر خزانہ برونو لی میرے نے واضح کیا ہے کہ یورپ ایران کے الٹی میٹم کو خاطر میں نہیں لائے گا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق فرانسیسی وزیرخزانہ کا منگل کے روز پیرس میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ میرا نہیں خیال یورپ کسی الٹی میٹم کی تجویز کو خاطر میں لائے گا۔

انھوں نے کہا کہ یورپیوں کو اس وقت امریکا کے ایران کے ساتھ تجارت کے معاملے میں سخت دباؤ کا سامنا ہے، اس صورت میں ایران کی جانب سے بڑی طاقتوں سے طے شدہ جوہری سمجھوتے سے انخلا مددگار ثابت نہیں ہوگا۔

ایران جوہری ڈیل سے دست برداری کے بعد یورپ پر دباؤ ڈال رہا ہے کہ وہ معاہدے کی پاسداری کرے تو ایران بھی اسی نقش قدم پر چلے گا۔

دوسری جانب ایرانی صدر حسن روحانی نے اپنے تازہ بیان میں کہا ہے کہ اب امریکا سے بات چیت ممکن نہیں ہے۔

یاد رہے کہ گذشتہ روز امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے ایک بیان میں کہا تھا کہ اگر ایران نے مشرق وسطٰی میں امریکی مفادات کے خلاف جارحانہ اقدام کیا، تو اس کا سامنا ایک بڑی فوج سے ہوگا ۔

اب امریکا سے بات چیت ممکن نہیں: ایرانی صدر حسن روحانی

امریکی صدر کا کہنا تھا کہ ان کی خواہش تھی ایران کے ساتھ معاملات مذاکرات کے زریعے حل ہو، ایران رضامند ہوتواب بھی ایران سے مذاکرات کے لئے تیارہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں